گوگل نے صارفین کی پرائیویٹ ویڈیوز لیک ہونے کا اعتراف کر لیا

سان فرانسکو: انٹرنیٹ کی دنیا کے سب سے بڑے سرچ انجن گوگل نے صارفین کی پرائیویٹ ویڈیوز اجنبیوں کو بھیجنے کا اعتراف کر لیا۔

ترجمان گوگل کی جانب سے جاری پیغام میں کہا گیا ہے کہ بعض صارفین کی نجی ویڈیوز غیر متعلقہ افراد کو بھیجنے پر گوگل معذرت خواہ ہے۔

بیان کے مطابق وہ صارفین جنہوں نے گوگل ٹیک آؤٹ ایپ کے ذریعے گزشتہ سال 21 سے 25 نومبر کے درمیان ڈیٹا ڈاؤن لوڈ کیا تھا انہیں دوسروں کی ویڈیوز موصول ہوئی تھیں جو کہ ایک تکنیکی خرابی کا نتیجہ ہے اور کمپنی اس غلطی پر متاثرہ صارفین سے معذرت کرتی ہے۔

گوگل ٹیک آؤٹ ایپ کے ذریعے صارفین اپنا گوگل ایپس کا تمام ڈیٹا ڈاؤن لوڈ کرتے ہیں تاہم کمپنی نے متاثرین کی حتمی تعداد کے بارے میں کچھ نہیں بتایا، چونکہ گوگل فوٹوز استعمال کرنے والوں کی تعداد ایک ارب سے زائد ہے اس لیے متاثرین کی تعداد بھی زیادہ ہونے کا امکان ہے۔

گوگل کا کہنا ہے کہ مسئلے کی نشاندہی ہوچکی ہے اور اس معاملے کو حل بھی کر لیا گیا ہے، کمپنی نے صارفین سے درخواست کی ہے کہ وہ مذکورہ تاریخوں کا بیک اپ ڈیٹا ڈیلیٹ کردیں۔