گلوکارہ صنم ماروی نے خلع کے لیے عدالت سے رجوع کرلیا

معروف لوک گلوکارہ صنم ماروی نے شوہر سے خلع کے لیے عدالت میں درخواست دائر کردی۔

لوک و صوفی گلوکارہ صنم ماروی نے شوہر حماد سے خلع کے لیے پنجاب کے دارالحکومت لاہور کی فیملی کورٹ میں اپنے وکیل کے توسط سے درخواست دائر کی۔

گلوکارہ نے اپنی درخواست میں الزام عائد کیا کہ شوہران پر تشدد کرنے سمیت ان کے خلاف نازیبا زبان بھی استعمال کرتے ہیں اور وہ شوہر کے ایسے رویے برداشت کرکے تھک گئی ہیں۔

صنم ماروی کی جانب سے دائر کی گئی درخواست میں کہا گیا ہے کہ ان دونوں کی شادی مکمل اسلامی روایات کے مطابق ہوئی اور جوڑے کو تین بچے بھی ہیں جن کی وجہ سے گلوکارہ شوہر کا تشدد برداشت کرتی ہیں۔

صنم ماروی کی جانب سے دائر کی گئی درخواست میں کہا گیا ہے کہ اب وہ مزید شوہر کا تشدد اور نازیبا زبان برداشت نہیں کر سکتیں، اس لیے عدالت ان کے خلع کی ڈگری جاری کرے۔

درخواست میں گلوکارہ نے بتایا کہ شادی کے ابتدائی سال میں ان کے شوہر کا رویہ بلکل درست تھا تاہم آہستہ آہستہ ان کا رویہ تشدد میں تبدیل ہوگیا۔

عدالت میں خلع کی درخواست دائر کیے جانے سے چند ماہ قبل گلوکارہ اور ان کے شوہر کے درمیان اختلافات کی خبریں شائع ہوئی تھیں۔

بعض میڈیا رپورٹس میں دعویٰ کیا گیا تھا کہ صنم ماروی کے شوہر کے پڑوس میں رہنے والی ایک ماڈل سے تعلقات ہیں جس وجہ سے گلوکارہ اور ان کے شوہر کے درمیان تنازعات ہونا معمول بن چکا ہے۔

تاہم بعد ازاں صنم ماروی نے ان رپورٹس کو بے بنیاد قرار دیا تھا لیکن اب انہوں نے شوہر سے خلع کے لیے عدالت میں درخواست دائر کردی۔