امریکا اور طالبان میں سات دن تشدد میں کمی کے لیے تجویز پرمذاکرات

پینٹاگان کے سربراہ مارک ایسپر نے کہا ہے کہ امریکا اور طالبان نے جنگ زدہ افغانستان میں سات روز تک تشدد میں کمی کے لیے ایک تجویز پر بات چیت کی ہے۔

مارک ایسپر نے برسلز میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا:’’ ہم نے ہمیشہ یہ کہا ہے کہ افغانستان میں جاری بحران کا حل ایک سیاسی سمجھوتے میں پنہاں ہے ،اس محاذ پر پیش رفت ہوئی ہے اور ہم اس حوالے سے بہت جلد اطلاع دیں گے۔‘‘

انھوں نے کہا کہ ’’ اگر ہم آگے بڑھتے ہیں اور پیش رفت کرتے ہیں تو یہ ایک مسلسل جائزے کا عمل ہوگا۔‘‘امریکی وزیر دفاع کا ممکنہ طور پر اشارہ افغانستان میں تشدد کے واقعات کی روک تھام اور ان کی نگرانی کی جانب تھا۔