مچھلی کے تیل کے کیپسول فائدے مند ہیں یا نہیں؟

اومیگا تھری فیٹی ایسڈز ایسے صحت مند فیٹس ہیں جو دل کو صحت مند رکھنے کے لیے ضروری ہے اور تمام طبی ماہرین اس بات پر متفق ہیں کہ اومیگا تھری فیٹی ایسڈز کے حصول کا بہترین ذریعہ آئلی فش یعنی مچھلی کے تیل کا استعمال ہے۔ مگر کیا مچھلی کے تیل کے کیپسول روزانہ کھانا اس حوالے سے فائدہ مند ثابت ہوتے ہیں؟ویسے تو اس بارے میں اب تک ابہام ہے۔ کچھ فوائد جانتے ہیں جو مچھلی کے تیل کے کیپسول سے پہنچتے ہیں،

جسمانی دفاعی نظام کی مضبوطی کے لئے

متعدد ممالک میں پولی ان سچورٹیڈ ایسڈز مختلف غذاؤں جیسے مکھن یا مارجرین میں شامل کیے جاتے ہیں، یہ وہ جز ہے جو مچھلی کے تیل میں موجود اومیگا تھری فیٹی ایسڈز میں بھی ہوتا ہے جو کہ جسمانی دفاعی نظام کو مضبوط بناتا ہے جبکہ جسم کو انفیکشن سے لڑنے میں مدد دیتا ہے۔

ہڈیوں کے لیے مفید

میری لینڈ یونیورسٹی کی تحقیق کے مطابق اومیگا تھری فیٹی ایسڈز صحت مند ہڈیوں کو برقرار رکھنے میں مدد دیتے ہیں، طبی رپورٹس کے مطابق یہ فیٹی ایسڈز جسم میں کیلشیئم کے جذب ہونے کی مقدار کو بڑھاتے ہیں جبکہ پیشاب کے ذریعے ان کے اخراج کو کم کرتے ہیں، جس سے ہڈیوں کی مضبوطی اور نشونما کو فروغ ملتا ہے۔

ذہنی امراض کے لئے مفید

مچھلی کے تیل کا اہم جز اومیگا تھری فیٹی ایسڈز صحت مند دماغی افعال کے لیے اہم ہوتے ہیں اور طبی رپورٹس کے مطابق یہ فیٹی ایسڈز ڈپریشن کے شکار افراد پر مثبت اثرات مرتب کرتے ہیں۔

بینائی کے لیےمفید

اس تیل میں موجود فیٹی ایسڈز سیال کے اخراج میں مدد دیتا ہے جس سے آنکھ کے نچلے حصے پر دباؤ کم ہوتا ہے، اس کا استعمال بینائی کے مختلف مسائل سے بچانے میں کسی حد تک مدد دے سکتا ہے۔