موٹروے زیادتی کیس میں مرکزی ملزم عابد علی کی بیوی زیر حراست

موٹر وے زیادتی کیس کا مرکزی ملزم عابد گرفتار نہ ہو سکا تاہم والدہ کے بعد اس کی بیوی کو بھی حراست میں لے لیا گیا ہے۔

موٹروے پر خاتون سے زیادتی کے دلخراش واقعے کے بعد مرکزی ملزم عابد کو زمین نگل گئی یا آسمان کھا گیا،8روز سے پولیس درندہ صفت ملزم کی تلاش میں ہے مگر کامیابی نہ مل سکی۔

ملزم عابد کی بیوی بشریٰ بی بی کو مانگا منڈی سے پولیس نے حراست میں لے لیا ، بشریٰ بی بی کی ملزم عابد سے دوسری شادی ہے،فیصل آباد کی تحصیل تاندلیانوالہ کی رہائشی خاتون کے سابقہ شوہر سے 4بچے ہیں۔

موٹر وے زیادتی کیس کے مرکزی ملزم عابد کی گرفتاری کے لیے رات گئے قصور میں سرچ آپریشن کیا گیا اور 2 کلو میٹر پر پھیلے کھیتوں کو گھیرے میں لے کر تلاشی لی گئی تاہم مرکزی ملزم پھر بھی ہاتھ نہ آ سکا۔

کیس میں اب تک خاتون سمیت ملزم عابد کے 5 رشتے دار زیر حراست ہیں۔

واضح رہے کہ 9ستمبر کی رات تقریباً ڈیڑھ بجے گجر پورہ کے قریب موٹر وے پر خاتون کو اس کے بچوں کے سامنے تشدد اور اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنانے کا واقعہ پیش آیا تھا۔