آٹے کی قیمت 15 دنوں میں کم ہو جائے گی۔ اسد قیصر

ویب ڈیسک (اسلام آباد): چکی آٹے کی قیمت میں ہفتے میں دوسری بار اضافے کے بعد نئی قیمت 76 روپے فی کلو تک پہنچ گئی ہے، ضلعی انتظامیہ گندم اور آٹے کے نرخوں کو روکنے میں کامیاب نہیں ہو سکی، صارفین کا کہنا ہے کہ حکومت نے 20 کلو آٹے کے تھیلے کی قیمت 860 روپے مقرر کی تھی لیکن وہ بھی نہیں مل رہا، دوسری جانب چکی آٹے کی قیمت میں ہفتے میں دوسری بار اضافے نے شہریوں کو پریشان کر کے رکھ دیا ہے، آٹا چکی اونرز ایسوسی ایشن کے ترجمان عبدالرحمان نے بتایا کہ پہلے چکی آٹے کی قیمت 72 سے 74 روپے اور آج قیمت 76 روپے فی کلو ہو گئی ہے، آٹا چکی مالکان کا کہنا ہے کہ گندم کی قیمت فی من 2400 روپے تک چلی گئی ہے، جس کی وجہ سے آٹے کی قیمت میں اضافہ کرنا پڑا، سرکاری کوٹہ گندم 5 بوری سے کم کر کے 3 بوری کر دی ہے جبکہ درآمدی گندم بھی پنجاب کو نہیں مل رہی ہے، چکی کے آٹے کی قیمت میں 2 روپے فی کلو اضافے پر صارفین نے شدید احتجاج کرتے ہوئے انتظامیہ سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے، قومی اسمبلی کے اسپیکر اسد قیصر نے کہا ہے کہ گندم درآمد کر رہے ہیں، 10 سے 15 دنوں میں آٹے کی قیمت کم ہو جائے گی۔