شمالی وزیرستان:پاک افغان دوطرفہ تجارتی تعلقات بڑھانے کی جانب ایک اوربڑا اقدام

ویب ڈیسک(شمالی وزیرستان)افغانستان سے آنے والی تجارتی گاڑیوں کو میران شاہ میں خالی کرنےکا آغازہوگیا،درپہ خیل فروٹ منڈی میں افتتاحی تقریب منعقد ہوئی۔

ذرایئع کے مطابق ڈپٹی کمشنر شاہد علی خان، ڈی پی او شفیع اللہ گنڈاپور، کرنل آئی آیس 7 ڈویژن، مشران اور تاجروں نےکثیر تعداد میں تقریب میں شرکت کی۔

ڈی سی نے کہا کہ تاجروں کا دیرینہ مطالبہ پورا کرکے افغان تجارتی گاڑیوں کو میران شاہ کی منڈیوں تک رسائی دی، مذکورہ اقدام سے نہ صرف خطے میں تجارت کی نئی راہیں کھلیں گی بلکہ دونوں ممالک کے عوام کو ایک دوسرے کے قریب آنے کا موقع ملے گا،وفاقی اور صوبائی حکومتیں دو طرفہ تجارت اور ٹرانزٹ ٹریڈ کو انتہائی اہمیت دے رہی ہیں۔بنوں میران شاہ روڈ کو دو رویہ کرنے، غلام خان کو ٹرانزٹ ٹریڈ روٹ ڈیکلیئر کرنا اور آف لوڈنگ پوانٹس کی منظوری اور قیام ہماری ترجیحات تھیں، تجارت کے اس نئے باب سے دونوں اطراف کے عوام اور تاجروں کا کاروبار مزید فروغ پائے گا۔

اس موقعہ پر ڈی پی نے کہا کہ قبائلی اضلاع میں معاشی ترقی کے نئے دور کا آغازہوگیا ہے جس سے ہزاروں لوگوں کو روزگار کے مواقع فراہم ہوں گے،میران شاہ میں افغان تجارتی گاڑیوں کی آف لوڈنگ سے ہزاروں مقامی افراد با روزگار ہو جائیں گے۔

علاقائی مشران اور تاجروں نے اس اقدام پر ضلعی انتظامیہ اور سیون ڈویژن کے حکام کو خراج تحسین پیش کی۔