شمالی وزیرستان میں پاک افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کا افتتاح کیا گیا

ویب ڈیسک (شمالی وزیرستان)شمالی وزیرستان میںپاک افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کا افتتاح کر دیا گیا ۔غلام خان بارڈر پر پاک افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کا افتتاح کردیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق افتتاحی تقریب میں وزیر ریلیف اقبال وزیر، وزیر ٹرانسپورٹ ملک شاہ محمد، ڈی سی شاہد علی خان، ڈی پی او شفیع اللہ گنڈاپور، عسکری حکام، مشران اور پاکستانی و افغان تاجروں نے شرکت کی ۔

شمالی وزیرستان: طورخم کے بعد غلام خان بارڈر پر پہلی بار ٹرانزٹ ٹریڈ کا آغاز ہوگیا۔وزیر ریلیف اقبال وزیر اور وزیر ٹرانسپورٹ ملک شاہ محمد نے پاک افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کا افتتاح کیا۔کراچی سے پہنچے ٹرانزٹ ٹریڈ کی دو گاڑیوں کو غلام خان بارڈر پر کابل روانہ کیا گیا۔: ٹرانزٹ ٹریڈ کے بعد غلام خان بارڈر کے راستے وسطی ایشیا تک تجارت ہوسکے گی ۔

اس حوالے سے وزیر ٹرانسپورٹ ملک شاہ محمدکا کہنا تھا کہ ٹرانزٹ ٹریڈ کا آغاز وزیرستان کی معاشی خوشحالی کا ذریعہ بنے گا، ٹرانزٹ ٹریڈ اور افغان گاڑیوں کی میران شاہ میں آف لوڈنگ سے مقامی لوگوں کی معاشی صورتحال بہتر ہونے میں مدد ملے گی، ٹرانزٹ ٹریڈ کھلنے سے دو طرفہ تجارت کو مزید فروغ ملے گا، 20 ہزار مقامی افراد کو روزگار کے مواقع میسر آئیں گے۔