یو اے ای نے پاکستان کیلئے قرض واپسی کی مدت میں توسیع کردی

ویب ڈیسک (دبئی)وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کی وزارتِ خارجہ، متحدہ عرب امارات آمد پراماراتی وزیر خارجہ جناب شیخ عبداللہ بن زاید النہیان نے وزیر خارجہ کا پرتپاک خیر مقدم کیا۔

وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کی اماراتی ہم منصب شیخ عبداللہ بن زاید النہیان سے ملاقات ہوئی ہے۔ ملاقات میں دو طرفہ تعلقات ،دو طرفہ تعاون کے فروغ سمیت اہم علاقائی و عالمی امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔تجارت، سرمایہ کاری، انفراسٹرکچر ڈویلپمنٹ، توانائی، ٹیکنالوجی، سیاحت اور افرادی قوت سمیت باہمی دلچسپی کے شعبوں میں دو طرفہ تعاون بڑھانے پر بھی بات چیت کی گئی۔

وزیر خارجہ نے ایکسپو 2020 دبئی میں پاکستانی پویلین کے قیام میں اماراتی حکومت کی بھرپور معاونت پر، اماراتی وزیر خارجہ کا شکریہ ادا کیا،پاکستان رواں سال اکتوبر میں متوقع "دبئی ایکسپو 2020" میں بھرپور شرکت کریگا اور اس ایکسپو کے ذریعے دنیا کی توجہ پاکستان کی تاریخ، جغرافیائی اہمیت، تہذیب و تمدن اور پاکستان میں کاروبار اور سیاحت کے میسر وسیع مواقعوں کی جانب مبذول کروائیں گے۔

اماراتی وزیرخارجہ نے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کو بتایا کہ متحدہ عرب امارات نے، ابو ظہبی فنڈ سے پاکستان کو دیے گئے 2 ارب ڈالر’امدادی قرض‘کی واپسی کی مدت میں توسیع کا فیصلہ کیا ہے۔انہوں نے یو اے ای کی تعمیر و ترقی میں پاکستانی کمیونٹی کی خدمات کو سراہا۔

وزیر خارجہ نے اس خیر سگالی اقدام پر اماراتی وزیر خارجہ کا شکریہ ادا کرتے ہوئے، اسے پاکستان اور یو اے ای کے درمیان بڑھتے ہوئے دو طرفہ تعلقات کا مظہر قرار دیا۔

یاد رہے پاکستان کے لیے متحدہ عرب امارات کو قرض کی واپسی کی ڈیڈ لائن 19 اپریل تھی تاہم اب اس میں توسیع کی گئی ہے۔

وزیر خارجہ نے کرونا وبا کے دوران ،یو اے ای میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کی معاونت کرنے اور پاکستانی ورک فورس کا خصوصی خیال رکھنے پر اماراتی وزیر خارجہ اور متحدہ عرب امارات کی قیادت کا شکریہ ادا کیااور ہم منصب کو ویزہ کے حصول میں پاکستانیوں کو درپیش مشکلات حل کرنے پر زور دیا۔انہوں نے پاکستانی کمیونٹی کو درپیش مسائل سے بھی امارتی ہم منصب کو آگاہ کیا۔

اماراتی وزیر خارجہ جناب شیخ عبداللہ بن زاید النہیان نے متحدہ عرب امارات کی تعمیر و ترقی میں، پاکستانی کمیونٹی کی گرانقدر خدمات کو سراہا۔

دوسری جانب وزیرخارجہ شاہ محمو قریشی نےشیخ عبداللہ بن زایدالنہیان کو ملاقات میں مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں اور بھارتی پالیسیوں کے باعث درپیش خطرات سے بھی آگاہ کیا۔

ملاقات میں دونوں وزرائے خارجہ کے مابین "افغان امن عمل" سمیت باہمی دلچسپی کے اہم علاقائی و عالمی امور زیر بحث آئے ،دونوں وزرائے خارجہ کا عالمی فورمز پر دو طرفہ تعاون بڑھانے پر اتفاق ہوا۔

وزیر خارجہ نے دورہ ء یو اے ای کے دوران کیے گئے پرتپاک خیر مقدم اور بہترین میزبانی پر، اماراتی وزیر خارجہ کا شکریہ ادا کیا اوراماراتی ہم منصب کو جلد دورہ ء پاکستان کی دعوت دی جسے انہوں نے شکریے کے ساتھ قبول کیا ۔

واضح رہے کہ یہ گذشتہ چار ماہ کے دوران، وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کا ،متحدہ عرب امارات کا دوسرا دورہ ہے جو دونوں ممالک کے مابین مثبت سمت میں، بڑھتے ہوئے دو طرفہ تعلقات اور اعلیٰ سطحی روابط کی عکاسی کرتا ہے۔