حسن گڑھی میں قبضہ مافیاکی خواتین کو دھمکیاں

حسن گڑھی میں قبضہ مافیاکی خواتین کو دھمکیاں

ویب ڈیسک :حسن گڑھی پشاور کی خاتون نے ایک مقامی شخص پر دھمکانے اور جائیداد پر قبضے کے الزامات لگائے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:طالبان نے طورخم سرحد مکمل طور پر بند کردی

پشاور پریس کلب میںدیگر خواتین کے ساتھ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے آسیہ جبین کا کہناتھا کہ سہیل نامی شخص بدنام زمانہ منشیات فروش ہے جو انہیں ڈرا دھمکا رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ ان کے والد کو 2005میں مسجد کے اند ر قتل کیا گیا جس کے بعد ان کی جائیدادپر قبضہ کرلیا گیا۔

انہوں نے یہ بھی الزام لگایا کہ حسن گڑھی میں آئے روز جائیدادوںپر قبضے میں ملوث لوگ خواتین پر تشددکر رہے ہیںجبکہ بچوں کو چھریوں کے وار کرکے قتل بھی کیا گیا۔جس کے خلاف آواز اٹھانے پر مجھ پر تیزاب پھینکنے کی دھمکیاں دی جا رہی ہیں۔

انہوں نے چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ سے انصاف کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ سرکاری گاڑیوں میں مسلح افرادانہیں ڈراتے دھمکاتے ہیں ۔انہوں نے الزام لگایاکہ مذکورہ سہیل نامی شخص پہلے بھی دو افراد کو قتل کر چکاہے جسے گرفتار کیا جائے۔