shiekh-TTP-talk

ٹی ٹی پی سے مذاکرات کا نہیں پتا ، شیخ رشید

ویب ڈیسک: وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید نے پاکستان کی حکومت اور تحریک طالبان پاکستان کے مابین مذاکرات کے بارے میں لاعلمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزارت داخلہ کا مذاکرات سے متعلق معاملے میں کوئی کردار نہیں ،اگر افغان طالبان کوئی مذاکرات کررہے ہیں تو میرے نوٹس میں نہیں ،اس بارے میں کچھ بھی کہنا قبل از وقت ہے،وزیر اعظم عمران خان کا فیصلہ ہے جو لوگ ہتھیار چھوڑ کر پاکستان کے آئین اور قانون پر یقین رکھیں گے، اس سے بات چیت ہوسکتی ہے، جو لوگ دہشت گرد ہیں ان سے بات نہیں ہوسکتی۔


جعلی شناختی کارڈ سے متعلق لاتعداد شکایات موصول ہوئی تھیں جس کے بعد جعلی شناختی کارڈ کے معاملے میں 136 افسران کا معطل کردیا ہے،افغانستان میں آن لائن ویزا جاری کرنے کیلئے انتظامات مکمل کرلیے ہیں،بھارت اور صومالیہ کے علاوہ دوسرے ممالک سے آنے والے تبلیغی جماعت کے اراکین کو کلیئرنس کے بعد ویزا میں چند دن کی توسیع دیں گے۔


پریس کانفرنس کے دوران ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ٹی ٹی پی کے ساتھ مذاکرات شروع ہی نہیں ہوئے اور اس میں وزارت داخلہ کا کوئی کردار نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ نادرا کے 90 افسران کے خلاف انکوائری جاری ہیں جبکہ تقریباً 300 افسران کو چارج شیٹ جاری کردی گئی ہے۔
انہوں نے کہا کہ آئندہ چند ماہ میں جعلی شناختی کارڈ کا ‘گند’ صاف کردیں گے۔پنڈورا پیپرز سے متعلق سوال کے جواب میں شیخ رشید نے کہا کہ پنڈورا پیپرز کھودا پہاڑ نکلا چوہا، جو نام سامنے آئے ہیں وہ تو پہلے بھی اسی طرح چل رہے تھے۔شیخ رشید نے بتایا کہ عید میلادالنبی ۖکے موقع پر قیدیوں کی سزا میں 90 دن کی رعایت کی سمری کابینہ ارسال کردی ہے۔


افغانستان سے متعلق بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ افغانستان میں آن لائن ویزا جاری کرنے کیلئے انتظامات مکمل کرلیے ہیں۔وفاقی وزیر نے کہا کہ افغان شہریوں کو 3 ہفتوں کے اندر آن لائن ویزا جاری کردیا جائے گا، 15 اگست سے آج تک تقریباً 20 ہزار افغان شہری پاکستان میں داخل ہوئے اور 6 ہزار لوگ پاکستان سے افغانستان گئے ہیں۔