French-clergy-abused-children

فرانس میں 3200 پادری بچوں سے زیادتی میں ملوث نکلے

ویب ڈیسک: فرانس کے مختلف گھر جا گھروں کے 3200 پادری اور ارکان 2لاکھ سے زائد کم عمر بچوں سے زیادتی میں ملوث نکلے ۔

چرچ میں بچوں سے زیادتی کے کیسز کی تحقیقات کرنے والے کمیشن کی رپورٹ  میں انکشاف ہوا ہے کہ 1950 سے اب تک بچوں کے ساتھ زیادتی میں ملوث ہزاروں افراد فرانسیسی کیتھولک چرچ میں ہی کام کرتے تھے اور مسیحی برادری کے تقریبا 2900  سے 3200  مذہبی پیشوا 2لاکھ سے زائد کم عمر بچوں کا جنسی استحصال کر چکے تھے۔

فرانسیسی کیتھولک چرچ میں بچوں سے زیادتی کی تحقیقات کیلئے 2018 میں آزاد کمیشن بنایا گیا تھا۔ کمیشن کی یہ رپورٹ 2500 صفحات پر مشتمل ہے ۔

رپورٹ میں یہ بھی انکشاف ہوا ہے کہ امریکا کی ریاست پینسلوینا کے چھ شہروں کے کیتھولک چرچ  میں مسیحی برادری کے تقریباً 300 مذہبی پیشواؤں کی جانب سے ایک ہزار سے زائد کم عمر بچوں کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا گیا ہے۔