رانا شمیم ویڈیو چلانے کی اجازت

رانا شمیم کے بیٹے نے ویڈیو چلانے کی اجازت مانگ لی

ویب ڈیسک: اسلام آباد ہائی کورٹ میں سابق چیف جسٹس گلگت وبلتستان رانا شمیم کے بیٹے نے عدالت سے ایک ویڈیو چلانے کی اجازت مانگ لی ہے جس کے بعد سب کی نظریں اس کیس کی سماعت پر لگ گئیں ہیں۔

آج ہونے والی سماعت سے پہلے رانا شمیم کے بیٹے نے عدالتی عملے سے ایک ویڈیو چلانے کی اجازت مانگی تو انہیں جواب دیا گیا کہ سماعت شروع ہونے کے بعد جج سے اجازت مانگ لیجئے گا۔ واضح رہے کہ اس کیس میں جہاں ایک بڑے میڈیا ادارے سے وابستہ صحافی ،ادارے کے مالک اور سابق چیف جسٹس گلگت وبلتستان رانا شمیم کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی شروع کرنے کا فیصلہ کیا گیا وہیں رانا شمیم کے بیٹے نے عدالت میں ایک ویڈیوچلانے کی اجازت بھی مانگ لی ہے۔ انہوں نے عدالت سے کہا کہ وہ اپنا لیپ ٹاپ بھی اس مقصد کے لئے لا سکتے ہیں۔ عدالتی عملے نے انہیں جواب دیا کہ سماعت جب شروع ہوگی تو جج سے پوچھ لیجئے گا۔

واضح رہے کہ گلگت وبلتستا ن کے سابق چیف جسٹس رانا شمیم نے اپنے ایک مبینہ بیان حلفی میں سابق چیف جسٹس ثاقب نثار پر الزام لگایا تھا کہ انہوںنے فون کرکے اسلام آباد ہائی کورٹ سے سابق وزیراعظم اور ان کی دختر مریم نواز کی 2018کے انتخابات سے قبل ضمانت منظور ہونے نہیں دی تھی ۔ اس الزام کی سابق چیف جسٹس ثاقب نثار تردید کر چکے ہیں۔