بائیڈن اور ہیرس تنازع کا انکشاف

بائیڈن اور ہیرس کے درمیان تنازع کا انکشاف

ویب ڈیسک: امریکی نیوز چینل نے کہا ہے کہ وائٹ ہائوس میں امریکی صدر جو بائیڈن اوران کی خاتون نائب کمالا ہیرس کی ٹیموں کے بیچ سخت تنازع چل رہا ہے۔

امریکی ٹی وی کی رپورٹ میں انکشاف کیا گیا کہ بائیڈن اور ان کی ٹیم کمالا ہیرس کی کارکردگی سے بری طرح مایوس ہوئے ۔ یہاں تک کہ خاتون نائب صدر پر عدم وفاداری کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ کمالا نے بائیڈن کی حمایت کے مقابلے میں خود کو صدارتی امیدوار کے طور پر نامزد کرنے کو بہتر جانا تھا۔

چینل نے اپنی رپورٹ میں کہا کہ دونوں جانب غصے کی آگ بھڑک رہی ہے اور ہر فریق دوسرے پر الزام تراشی کررہا ہے۔ سی این این سے بات چیت کرنے والے تیس کے قریب امریکی حالیہ اور سابقہ ذمے داران کا کہنا تھا کہ وائٹ ہائوس کے اندر صورت حال پیچیدہ ہے۔ خاتون نائب صدر کے حلقے کے بہت سے لوگ کمالا ہیرس کو کمزور کرنے کی کوشش پر چراغ پا ہیں۔

کمالا ہیرس نے اپنی کئی مقرب شخصیات کو آگاہ کیا کہ وہ سیاسی طور پر مقید ہیں۔ ادھر بائیڈن کی ٹیم کو پورا یقین ہے کہ خاتون نائب صدر عدم وفاداری کے گورکھ دھندے میں ہیں۔ کمالا ہیرس کو اس حد تک کمزور پوزیشن میں دیکھا جا رہا ہے کہ واشنگٹن کے اندر اور باہر سینئر ڈیموکریٹس نے خفیہ طور سے باتیں شروع کر دی ہیں۔ یہ لوگ ایک دوسرے سے پوچھ رہے ہیں کہ وائٹ ہائوس نے خاتون نائب صدر کو اس بات کا موقع کیوں دیا کہ وہ منظر عام سے انتہائی حد تک غائب ہو جائیں۔