حکومت نوجوانوں کو قرضوں کی فراہمی

حکومت کا اس سال نوجوانوں کو 50 ارب روپے کے قرضوں کی فراہمی کا فیصلہ

وزیر مملکت برائے اطلاعات و نشریات فرخ حبیب نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے اس سال نوجوانوں میں کاروباری صلاحیت کو فروغ دینے اور ملک میں روزگار کے مواقع پیدا کرنے کے لیے کامیاب جوان پروگرام کے تحت پچاس ارب روپے کے قرضوں کی فراہمی کا ہدف مقرر کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ہفتے کے روز اسلام آباد میں ایک نیوز کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے فرخ حبیب نے کہا کہ کامیاب جوان پروگرام کے تحت گزشتہ دو سالوں میں تیس ارب روپے کے قرضے دیئے گئے جس کے تحت بائیس ہزار نئے کاروبار کھولے گئے اور اس کی وجہ سے نوجوانوں کو پچاس ہزار براہ راست ملازمتیں فراہم ہوئیں جبکہ بالواسطہ طور پر ہزاروں دیگر ملازمتیں بھی پیدا ہوئیں۔

یہ بھی پڑھیں: کامیاب جوان پروگرام کے تحت دی جانے والی رقم پر شرح سود 8٪ سے کم کرنے کا فیصلہ

یہ بھی پڑھیں: کامیاب جوان پروگرام کے تحت رقم کی تقسیم میں تیزی لانے کا فیصلہ

وزیر مملکت کا کہنا تھا کہ کابینہ میں ایک تجویز منظوری کے لیے پیش کی جائے گی جس کے تحت 20 لاکھ روپے تک کے قرضے لینے والوں سے کوئی ضمانت نہیں مانگی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ 10 ارب روپے کے اسکل فار آل پروگرام کے تحت نوجوانوں کو مصنوعی ذہانت، کلاؤڈ کمپیوٹنگ، گرافک ڈیزائننگ وغیرہ جیسے شعبوں میں ہائی ٹیک سرٹیفیکیشن فراہم کیا جا رہا ہے۔

فرخ حبیب نے مزید کہا کہ حکومت رواں مالی سال کے دوران اپنی آئی ٹی برآمدات کو تین بلین ڈالر تک بڑھانے کا ہدف رکھتی ہے اور اس سکل ڈویلپمنٹ پروگرام سے ہماری آئی ٹی برآمدات کو مضبوط بنانے میں مدد ملے گی۔