چین تعلقات ہمیشہ مشکل وقت میں ثابت قدم رہے.نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر

اسلام آباد:اقوام عالم میں پاک چین دوستی مثالیہے .ترجمان نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹرکا کہنا تھا کہ چین نے حق ادا کر دیا کورونا وائرس کے خلاف جنگ میں قدم قدم پر چین پاکستان کے شانہ بشانہ رہا.پاک چین تعلقات ہمیشہ مشکل وقت میں ثابت قدم رہے، انہوں نے کہا کہ دنیا کو کورونا وائرس کا چینلج درپیش ہوا تو دونوں ممالک شانہ بشانہ آ گئے،چین نے ووہان میں پاکستانی طلبا کا خیال رکھا، چین نے کورونا کیخلاف جنگ میں پاکستان کو ہنگامی طبی امداد فراہم کی، چین کی طبی ماہرین کی ٹیم نے پاکستان کا دورہ کیا، نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹرکا کہنا تھا کہ چینی ماہرین نے ڈاکٹرز، سرکاری اہلکاروں، شعبہ صحت کے حکام سے ملاقاتیں کیں، طبی ماہرین اسلام آباد، راولپنڈی، کراچی، لاہور اور کمانڈ سینٹرپاک، چین افواج کے مابین ٹیلی کانفرنس بھی منعقد ہوئی،چینی وفد، آرمڈ فورسز انسٹیٹیوٹ آف پتھالوجی بھی گیا،ر چینی ماہرین کے وفد نے پنجاب، سندھ کے وزرائے اعلی سے ملاقاتیں کیں، انفیکشن سے تحفظ اور بچا، انفرادی حفاظتی آلات کا استعمال ناگزیر قرار، وفد نے کورونا وائرس کیخلاف جنگ میں پاکستان کی ہر ممکن مدد کا عزم ظاہر کیا،چین نے مشکل وقت میں پاکستان کو اہم طبی آلات، اشیا اور ادویات فراہم کیں، چین نے فوری طور پر 5 لاکھ 29 ہزار 924 این95 ماسک فراہم کیے،چینی امداد میں 33 ہزار 744 حفاظتی لباس، 10 ہزار ٹیسٹنگ کٹس شامل تھیں،چین نے 15 لاکھ 58 ہزار 379 میڈیکل ماسک بھی فراہم کیے،انہوں نے کہا کہ چین نے مشکل ترین وقت میں 36 ونٹیلیٹرز، 180 تھرمومیٹر،100 تھرمل سکینرز دیے، 24 ہزار 900 دستانے، 59 ہزار 376 حفاظتی عینکیں بھی چینی امداد کا حصہ تھیں، چین نے 10 ہزار لیٹر سینیٹائزر، حفاظتی سوٹس کیلئے 1442 کلوگرام ان سلا کپڑا فراہم کیا، نے گلگت بلتستان میں کورونا وائرس سے نمٹنے کیلئے خصوصی مدد کی،چین نے خنجراب کے راستے بروقت طبی امداد بھجوائی،چینی امداد میں 5 ونٹیلیٹرز، 2 لاکھ ماسک، 2 ہزار این 95 ماسک شامل تھے،چین نے گلگت بلتستان کیلئے 2 ہزار ٹیسٹنگ کٹس، 2 ہزار حفاظتی سوٹس بھی دئیے،پاک آرمی نے بذریعہ ہیلی کاپٹرز طبی سامان گلگت بلتستان کے مختلف علاقوں تک پہنچایا.