وزیر ہاؤسنگ پنجاب اسد کھوکھر

وزیر ہاؤسنگ پنجاب اسد کھوکھر اور ان کے خاندان کیخلاف قتل کا مقدمہ

وزیر ہاؤسنگ پنجاب اسد کھوکھر اور ان کے قریبی رشتہ داروں کے خلاف ایک شخص کے قتل کا مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق لاہور کے شرقپور پولیس کا کہنا ہے کہ صوبائی وزیر کے گاؤں مانو وال کے رہائشی عظیم کی درخواست پر وزیر ہاؤسنگ اسد کھوکھر، ان کے بھائی، بیٹے اور بھتیجے کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: اب کالعدم ٹی ٹی پی سے جنگ ہو گی، اس کے علاوہ کوئی اور راستہ نہیں

یہ بھی پڑھیں: کراچی: 46 لاکھ روپے کی ڈکیتی ميں ملوث سابق رينجرز اہلکار گرفتار

شرقپور پولیس کے مطابق مانو وال کے رہائشی عظیم کی درخواست پر اسد کھوکر، مدثر کھوکر، بیٹے حمزہ کھوکر اور بھیتجے حسن کھوکھر کا نام مقدمے میں درج کیا گیا ہے۔ ایف آئی آر میں لکھا گیا ہے کہ مقتول اختر حسین کو صوبائی وزیر کے بیٹے حمزہ اور بھتیجے حسن نے قتل کیا۔

ایف آئی آر کے متن کے مطابق مقتول کے بھائی اور والد کو بھی صوبائی وزیر اور ان کے قریبی رشتہ داروں نے قتل کیا تھا۔

واضح رہے کہ 6 ماہ قبل وزیر ہاؤسنگ پنجاب اسد کھوکر کے بھائی مبشر کھوکھر کو شادی کی تقریب میں قتل کیا گیا تھا۔

مزید دیکھیں :   دھمکیاں اور مذاکرات ساتھ نہیں چل سکتے: حکومت کا عمران خان کو جواب