پسند کی شادی

پسند کی شادی کرنیوالے جوڑے کو ذبح کرنے میں رشتہ دار ملوث

کوہستان میں پسند کی شادی کرنے والے جوڑے کے قتل میں رشتے داروں کے ملوث ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔

پولیس ذرائع کے مطابق پسند کی شادی کرنے والے جوڑے کے قتل کے الزام میں 5 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے اور قتل کیس میں رشتے داروں کے ملوث ہونے کے شواہد ملے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:سوات،پسند کی شادی کرنے والے جوڑے کو ذبح کردیا گیا

پولیس کے مطابق شادی کےبعد میاں بیوی تحصیل چارباغ میں کرائےکے مکان میں رہتے تھے، ان کا تعلق کوہستان کے علاقے جل کوٹ سے تھا اور جوڑے کی پسند کی شادی سے مبینہ طور پر دونوں کے گھر والےخوش نہیں تھے۔

واضح رہے کوہستان کے مجیب رحمان اور مسماۃ لاہور بی بی نے ستمبرمیں شادی کی تھی اور کرائے پر گھر لے کر سکونت اختیار کی تھی، جوڑے کو 5 فروری کو قتل کیا گیا جس میں نامعلوم ملزمان نے رات کے وقت تیز دھار آلے سے دونوں کے گلے کاٹ دیے تھے،مقتولین کے پاس موجود نکاح نامہ کے مطابق دونوں کا نکاح اکیس ستمبر 2021 کو روبرو گواہان ہوا تھا اور 30جنوری2022کو رجسٹریشن کی گئی تھی۔  ابتدائی طور پر قتل کا مقدمہ نامعلوم افراد کے خلاف درج کیا گیا تھا۔

مزید دیکھیں :   بنوں پولیس اورلیویز خاصہ داروں کے درمیان حالات مزید کشیدہ ہوگئے