کابل میں سکھ گوردوارے پر حملہ

کابل میں سکھ گوردوارے پر حملہ ،2 افراد مارےگئے،متعدد زخمی

کابل: (مشرق نیوز) افغان دارالحکومت کابل میں سکھوں کے گوردوارے پر حملے میں کم از کم2 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے، تاہم فوری طور پر کسی نے حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی۔

مندر کے ایک اہلکار گورنام سنگھ نے کہا کہ مندر کے اندر تقریباً 30 لوگ موجود تھے۔ "ہمیں نہیں معلوم کہ ان میں سے کتنے زندہ ہیں یا کتنے مردہ ہیں۔”

ترجمان طالبان وزارت داخلہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ حملہ آوروں نے دھماکا خیز مواد سے بھری گاڑی کو اپنے ہدف تک پہنچنے سے قبل ہی دھماکے سے اُڑا دیا۔ فورسز نے علاقے کا کنٹرول سنبھال لیا ہے اور اسے حملہ آوروں سے پاک کردیا گیا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ دہشتگرد حملے میں ایک سکھ عبادت گزار مارا گیا اور ایک طالبان جنگجو کلئیرنس آپریشن کےدوران مارا گیا۔

مزید دیکھیں :   خیبر پختونخوا میں پناہ گاہیں اوربحالی مراکزبند