بچی کی پھندا لگی لاش برآمد

پشاور ریلوے کوارٹر میں 11 سالہ بچی کی مبینہ زیادتی کے بعد پھندا لگی لاش برآمد

ویب ڈیسک: پشاور صدر ریلوے کوارٹر میں 11 ماہ نور بچی قتل شدہ لاش ملی ہے۔
پولیس حکام کا کہنا ہے کہ بچی کو گلے میں پھندا لگا کر قتل کیا گیا۔ جائے وقوعہ سے شواہد اکھٹے کئے گئے ہیں، لاش پوسٹ مارٹم کیلئے ہسپتا ل منتقل کر دی ہے۔ بچی سے زیادتی کے شواہد چانچنے کیلئے لیبارٹری ٹیسٹ کئے جارہے ہیں۔ قتل واقعے کی ایف آئی آر تھانہ شرقی میں درج کر دی گئی ،ایف آئی آر میں قتل اقدام قتل کے دفعات شامل ہیں۔
بچی کے والدین کا کہنا ہے کہ ماہ نور گزشتہ شب دکان سے سودا لینے گئی پھر واپس نہیں آئی۔ملزمان نے زیادتی کے بعد بچی کو اینٹیں مار کر مار دیا۔
واضح رہے متاثرہ بچی کے خاندان کا تعلق میانوالی سے ہے اور والد ریلوے کا ملازم ہے۔
دوسری جانب ورثا اور علاقہ مکینوں نے بچی کی لاش پشاور پریس کلب کے باہر رکھ کر روڈ کو ٹریفک کیلئے بند کر دیا۔ مظاہرین نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ بچی کے قاتلوں کو گرفتار کر کے سرعام پھانسی دی جائے۔

مزید دیکھیں :   شہبازگل کے مزید جسمانی ریمانڈ کی استدعا مسترد