عوامی مینڈیٹ چوری کیا توپھرجو ہوگا میں ذمہ دار نہیں،عمران خان

اسلام آباد: (مشرق نیوز) چیئرمین پی ٹی آئی اور سابق وزیراعظم عمران خان نے خبردار کردیا کہ پنجاب کے عوام نے ہمیں واضح مینڈیٹ دیا ہے، اگر چوری کے پیسے سے عوامی مینڈیٹ چوری کیا تو پھر جو ہوگا اُس کا ذمہ دار میں نہیں ہوں گا۔
اپنے خطاب میں عمران خان کا کہنا تھا کہ پنجاب میں تحریک انصاف کا امیدوار وزیراعلیٰ بنے گا۔ عوام نے ہمیں واضح مینڈیٹ دیا ہے۔ پہلے بھی چوری کا پیسہ لگاکر ہماری حکومت گرائی گئی اب پھر پیسہ لگایا جارہا ہے۔ آصف زرداری اور شہبازشریف پر اربوں روپے کے کرپشن کیسز ہیں۔ ساڑھے3 سال میں جن کے پاس طاقت تھی اُنھوں نے اِن دونوں کو بچایا۔ آج یہ چوری کا پیسہ لگاکر عوامی مینڈیٹ چرانا چاہتے ہیں۔ سپریم کورٹ کو بتایا تھا30 سال سے سینیٹ الیکشن میں پیسہ چل رہا ہے۔ یوسف رضا گیلانی کے بیٹے کی رشوت دیتے ہوئے ویڈیو وائرل ہوئی۔ ہم ویڈیو الیکشن کمیشن لے کر گئے لیکن کوئی ایکشن نہیں لیا گیا۔ سپریم کورٹ نے رولنگ دی جو ووٹ ڈالا جائے اُس کی تصدیق ہونی چاہئے، چیف الیکشن کمشنر نے ووٹوں کی تصدیق کی اجازت نہیں دی۔ سکندر سلطان جیسا بددیانت چیف الیکشن کمشنر نہیں دیکھا۔ پنجاب ضمنی الیکشن میں صرف سیاسی مخالفین سے نہیں بلکہ انتظامیہ، سرکاری مشینری اور الیکشن کمیشن سے بھی مقابلہ تھا۔ ہمیں الیکشن ہرانے کیلئے الیکشن کمیشن نے ہر قسم کا حربہ استعمال کیا میں نے کبھی ایسا الیکشن کمیشن نہیں دیکھا۔ تحریک انصاف ملک کی سب سے بڑی جماعت ہے ہمارا چاروں صوبوں میں ووٹ بینک ہے۔ جب ملک کی بڑی جماعت کو اعتماد نہیں تو چیف الیکشن کمشنر کو مستعفی ہوجانا چاہئے۔ موجودہ چیف الیکشن کمشنر کے ہوتے ہوئے شفاف انتخابات نہیں ہوسکتے۔ شفاف انتخابات کیلئے ہم نے ای وی ایم لانے کی کوشش کی جس کی پی ڈی ایم اور الیکشن کمیشن نے مخالفت کی تھی۔ کرپشن کا پیسہ چلا کر عوامی مینڈیٹ چرانے کی کوشش ہورہی ہے، خبردار کرتا ہوں اگر عوامی مینڈیٹ چوری کیا تو پھر میں ذمہ دار نہیں ہوں گا، کوئی غلط فہمی میں نہ رہے کہ ہم خاموش بیٹھے رہیں گے۔ قوم کو کہتا ہوں اگر آپ کا مینڈیٹ چوری ہوا تو خاموش نہیں رہنا۔

مزید دیکھیں :   غیر قانونی چنگ چی سٹاپ سے اندرون شہر رش معمول بن گیا