شہبازگل

شہبازگل کے مزید جسمانی ریمانڈ کی استدعا مسترد

ویب ڈیسک: اداروں کے خلاف اکسانے کے کیس میں پی ٹی آئی رہنما ڈاکٹر شہباز گل کے مزید جسمانی ریمانڈ کی استدعا کو مسترد کر دی گئی۔
اسلام آباد کی مقامی عدالت کے حکم پر شہباز گل کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا گیا۔
شہباز گل نے کمرہ عدالت کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے اعترافی بیان کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ میں نے کوئی اعترافی بیان نہیں دیا ۔ انہوں نے کہا کہ اپنی افواج کے بارے میں سوچ بھی نہیں سکتا ایسی بات کروں ۔ انہیں سیاسی انتقام کا نشانہ بنایا جا رہا ہے ۔ مجھے شدید تشدد کا نشانہ بنایا گیا ، میڈیکل ہوا نہیں خود ہی کر لیا گیا ۔ میرا فرضی میڈیکل اپنی مرضی سے بنایا گیا ۔
شہباز حگل نے کہا کہ مجھے وکلا سے ملنے نہیں دیا جا رہا ، مجھے سونے نہیں دیا جاتا ساری ساری رات مجھے جگایا جاتا ہے۔ شہباز گل نے کہا کہ میں پروفیسر ہوں کریمنل نہیں ہوں ۔ مجھے تھانہ کوہسار بھی نہیں رکھا گیا ، پوچھا جاتا ہے سابق وزیراعظم کھاتے کیا ہیں ۔ میں وفاقی کابینہ کا ممبر رہا ہوں ۔

مزید دیکھیں :   پشاور میں سیکیورٹی فورسز اور دہشتگردوں کے درمیان جھڑپ