محکمہ صحت کے سیکرٹریٹ سے انکوائریز

ہیلتھ ڈائریکٹوریٹ اور سیکرٹریٹ سے انکوائریز کا ریکارڈ غائب

ویب ڈیسک :محکمہ صحت کے سیکرٹریٹ اور ڈائریکٹوریٹ سے بدعنوانی میں ملوث افسران اور ملازمین کیخلاف کرائی گئی90فیصد انکوائریز اور دیگر خریداریوں وغیرہ کا ریکارڈ غائب کردیا گیا ہے جس کی وجہ سے سیکرٹری صحت کو محکمانہ کارروائی میں مشکلات کا سامنا ہے ہیلتھ ڈائریکٹوریٹ کے ذرائع کا دعویٰ ہے کہ محکمہ صحت نے بدعنوانی اور ضابطوں کی خلاف ورزی میں ملوث افراد کیخلاف انکوائریز کرائی ہیں جو کارروائی کیلئے ہیلتھ ڈائریکٹوریٹ اور سیکرٹریٹ بھیجی گئی ہیں لیکن ان انکوائریز کا زیادہ تر ریکارڈ ہیلتھ ڈائریکٹوریٹ سے واش کردیا گیا ہے
ذرائع نے بتایا کہ نزدیکی دنوں میں5 سے زائد اہم انکوائریز کا ریکارڈ ہیلتھ سیکرٹریٹ سے بھی غائب ہوا ہے ان انکوائریز میں ایک ڈائریکٹر، ایک ایم ایس پر مبینہ طور پر پیسے لینے کا الزام ثابت کیا گیا تھا اور اس کے ناقابل تردید آڈیو اور ویڈیو شواہد موجود تھے اس طرح درجنوں کی تعداد میں انکوائریز کو2013سے2018کے درمیان غائب کیا گیا ہے اور2018سے اب تک اربوں روپے کی انکوائریز پر پیش رفت نہیں ہوئی ہے ذرائع نے بتایا کہ زیادہ ترا نکوائریز کی سفارشات پر عملدر آمد نہیں ہوا ہے جبکہ جن انکوائریز پر عملدر آمد ہوا ہے
ان انکوائریز میں قواعد وضوابط کی خلاف ورزی ہوئی لیکن یہ انکوائریاں بھی مکمل کرنے کی بجائے ادھوری چھوڑ دی گئی ہیں جس کے نتیجے میں موجودہ سیکرٹری صحت اور ہیلتھ ڈائریکٹوریٹ کے حکام کو کارروائی میں مشکلات کا سامنا ہے ذرائع بنے بتایا کہ اس مقصد کیلئے اب انکوائری افسران سے رابطہ کیا جائے گا اور محکمہ صحت سے انکوائریز کیلئے جاری حکم ناموں کی روشنی میں مذکورہ ریکارڈ تلاش کرنے کی کوشش کی جائے گی۔

مزید دیکھیں :   سیکیورٹی فورسز کی بروقت کارروائی، ملک کو بڑی تباہی سے بچا لیا