آٹا بحران عمر زئی میں مظاہرے

مہنگائی ،آٹا بحران اور لوڈ شیڈنگ کے خلاف چارسدہ اور عمر زئی میں مظاہرے

ویب ڈیسک : مہنگائی ،آٹے کی عدم دستیابی ،گیس اور بجلی کے لوڈ شیڈنگ کے خلاف تاجر اتحاد چارسدہ اور پختونخوا قومی مومنٹ کے زیر اہتمام فاروق اعظم چوک چارسدہ میں احتجاجی مظاہرہ کیا گیا جبکہ عمر زئی بازار میں بھی احتجاجی مظاہرہ اور روڈ بلاک کیا گیا ۔جس میں تاجر برادری سمیت سیاسی پارٹیوں اور مختلف مکاتب فکر کے لوگوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی مظاہرے سے تاجر اتحاد کے مرکزی صدر افتخار صراف ،جنرل سیکرٹری حبیب ٹیلر،پی کیو ایم کے عہدیداروں ولی محمد،اکبر خان ،جے یو آئی کے مولانا جمیل احمد ،جے آئی یو تھ کے نوید خان اور دیگر نے خطاب کیا جبکہ جماعت اسلامی کے ضلعی امیر شاہ حسین خان بھی موجود تھے ۔مقررین نے کہا کہ کمر توڑ مہنگائی نے عوام کا جینا حرام کردیا ہے ۔صوبائی حکومت اپنے سیاسی اور ذاتی مفادات کیلئے سرگرم عمل ہے عوام کا کوئی پرسان حال نہیں آٹا نا پید ،چینی ،گھی سمیت دیگر اشیاء خورد و نوش کی قیمتوں میںہوش ر با اضافہ گیس اور بجلی کی عدم دستیابی سے کاروبار زندگی مفلوج اور سفید پوشی کا بھرم رکھنا مشکل ہو گیا ہے ۔کاروبار ٹھپ ہو کر رہ گئے ہیں صوبائی اور وفاقی حکومتیں عوام پر رحم کریں اور عوام کو ریلیف دینے کیلئے عملی اقدامات اُٹھائیں ۔
علاوہ ازیں عمرزئی بازار میں بھی مہنگائی کے خلاف احتجاجی مظاہرہ اور روڈ بلاک ہوا مظاہریں سے اے این پی کے ضلعی صدر و ایم پی اے شکیل بشیر خان عمر زئی ،سراج الحق، سعادت اللہ خان جے یو آئی کے مولانا امجد اور دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکومت کی اشیر باد پر گندم مافیا سرگرم عمل ہے اور مافیا نے آٹے کی قیمتوں میں خود ساختہ اضافہ کرکے عوام کی کمر توڑ د ی حکومتی اراکین منظر عام سے غائب ور اپنی تجوریاں بھرنے میں مصروف عمل ہیں۔

مزید دیکھیں :   ایک اور بڑی گرفتاری، سابق وزیرداخلہ شیخ رشید راولپنڈی سے گرفتار