عبدالطیف آفریدی قاتلانہ حملے

سینئرقانون دان عبدا لطیف آفریدی قاتلانہ حملے میں جاں بحق

ویب ڈیسک: سینئرقانون دان اور سابق صدر سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن عبدالطیف آفریدی قاتلانہ حملے میں جاں بحق ہوگئے۔
پشاورہائیکورٹ کے بار روم میں فائرنگ کے نتیجے میں سینئر قانون دان شدید زخمی ہوگئے جنہیں تشویشناک حالت میں لیڈی ریڈنگ ہسپتال منتقل کیا گیا۔ ہسپتال انتظامیہ نے انکے جاں بحق ہونے کی تصدیق کردی۔
ترجمان ایل آر ایل کا کہنا ہے کہ سینئرقانون دان عبدالطیف آفریدی کو مردہ حالت میں ہسپتال لایا گیا، لطیف آفریدی کو متعدد گولیاں لگی تھیں۔
پولیس نے لطیف آفریدی پر فائرنگ کرنے والے ملزم کو جائے وقوعہ سے گرفتار کرلیا۔ ملزم کی شناخت عدنان کے نام سے ہوئی ہے۔
واضح ر ہےکہ معروف قانون دان لطیف آفریدی سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر بھی رہ چکے تھے۔

مزید دیکھیں :   بینکنگ سیکٹر سے حاصل قرضوں میں ایک ہزار ارب روپے کا اضافہ