8 ایکسچینج کمپنیوں کے لائسنس معطل

ڈالر کی مصنوعی قلت پیدا کرنے پر 8 ایکسچینج کمپنیوں کے لائسنس معطل

ویب ڈیسک : اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے ڈالر کی مصنوعی قلت پیدا کرنے اور اپنے کاونٹرز پر دستیاب ہونے کے باوجود اپنے صارفین کو غیرملکی کرنسیوں کی فروخت سے انکار کرنے میں مبینہ طور پر ملوث آٹھ ایکسچینج کمپنیوں کے گیارہ آوٹ لیٹس کے لائسنس معطل کر دیئے ہیں۔ اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے ریگولیٹری ہدایات کی خلاف ورزیوں پر ان آئوٹ لیٹس کے لائسنس فوری طور پر پندرہ دنوں کیلئے معطل کر دیئے ہیں۔ اسٹیٹ بینک کی ٹیم کے ممبران نے ایکسچینج کمپنیوں کے آئوٹ لیٹس پر جا کر خود کو بطور صارف ظاہر کرکے کرنسی حاصل کرنے کی کوشش کی جس میں یہ بات نوٹ کی گئی کہ مذکورہ آوٹ لیٹس اپنے کائونٹرز پر دستیاب ہونے کے باوجود اپنے صارفین کو غیر ملکی کرنسیوں کی فروخت سے انکار کر رہے تھے۔ اسٹیٹ بینک کا کہنا ہے کہ تمام گیارہ آئوٹ لیٹس کو معطلی کی مدت کے دوران کسی بھی قسم کی کاروباری سرگرمی کرنے سے روک دیا گیا ہے۔

مزید دیکھیں :   سابق وزراء کاایک گھنٹہ پریس کانفرنس میں سانحہ پشاورپرایک جملہ