چیئرمین پی ٹی آئی کی اڈیالہ جیل

چیئرمین پی ٹی آئی کی اڈیالہ جیل منتقلی کی درخواست پر سماعت موخر

ویب ڈیسک: چیئرمین پی ٹی آئی کی اڈیالہ جیل منتقلی کی درخواست پر سماعت نہ ہو سکی، ذرائع کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ میں سابق وزیراعظم کی اٹک سے اڈیالہ جیل منتقلی کے لیے دائر درخواست کی سماعت آج ہونا تھی تاہم ہائیکورٹ کے چیف جسٹس عامر فاروق کی عدم موجودگی کے باعث آج سماعت نہیں ہو سکے گی۔ چیئرمین پی ٹی آئی کو گھر کا کھانا فراہم کرنے کی درخواست پر بھی آج ہی سماعت ہونا تھی۔ اسلام آباد ہائیکورٹ نے پنجاب حکومت اور جیل حکام سے چیئرمین پی ٹی آئی کو اٹک جیل میں رکھنے کی وجوہات سے متعلق رپورٹ طلب کی تھی۔
عدالت نے دوران سماعت پوچھا تھا کہ بتایا جائے کن وجوہات کی بنیاد پر انہیں اٹک جیل میں رکھا گیا، عدالت نے اس بات پر معاونت طلب کی تھی کہ چیئرمین پی ٹی آئی کو گھر کا کھانا دیا جاسکتا ہے یا نہیں۔
عدالت نے فیصلے میں کہا کہ ایسا کچھ ریکارڈ پر نہیں جو قیدی کو ہفتے میں ایک سے زائد بار ملاقات سے روکے، جیل رولز کے مطابق چیئرمین پی ٹی آئی کی دوست، رشتے دار اور وکلا سے ملاقات کروائیں، انہیں جائے نماز اور انگریزی ترجمے کے ساتھ قرآن مجید دیا جائے۔ عدالتی فیصلے میں مزید کہا گیا تھا کہ چیئرمین پی ٹی آئی کو مناسب طبی سہولیات بھی فراہم کی جائیں۔

مزید پڑھیں:  اقوام متحدہ نے غزہ کو مقتل گاہ قرار دیا ،اسرائیلی کارروائیوں پر تشویش