اٹک جیل میں سائفر مقدمے

اٹک جیل میں سائفر مقدمے کی سماعت قبول نہیں، پی ٹی آئی

ویب ڈیسک: پی ٹی آئی کور کمیٹی نے پارٹی چیئرمین عمران خان کے خلاف اٹک جیل میں سائفر مقدمے کی سماعت قبول کرنے سے انکار کر دیا۔ پی ٹی آئی کور کمیٹی کے اجلاس کے بعد جاری اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ چیئرمین پی ٹی آئی کے خلاف اٹک جیل میں سائفر مقدمے کی سماعت قبول نہیں، سابق وزیراعظم کو آزادانہ اور منصفانہ ٹرائل سے محروم کیا جا رہا ہے۔
اعلامیے کے مطابق جیل کے خفیہ ٹرائل کو عدالت میں چیلنج کرچکے ہیں لہٰذا عدالت فوری سماعت کرے۔ اعلامیے میں مزید کہا گیا ہے کہ یہ حقیقت ہے کہ سائفر اپنی اصلی حالت میں آج بھی دفتر خارجہ میں موجود ہے، سائفر کو وفاقی کابینہ نے ڈی کلاسیفائی کیا جس کے بعد آفیشل سیکرٹ ایکٹ لاگو نہیں ہوتا۔
پی ٹی آئی کے وکیل شعیب شاہین نے کہا کہ اب بھی وقت ہے معاملات ٹھیک کریں کیونکہ سائفر کیس سیاسی انتقام کے سوا کچھ نہیں۔ واضح رہے کہ سائفر کیس میں سابق وزیراعظم اور چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کے جوڈیشل ریمانڈ میں 14 روز کی توسیع کر دی گئی ہے۔

مزید پڑھیں:  خیبرپختونخوا کابینہ کا اجلاس طلب، 16 نکاتی ایجنڈا بھی جاری کر دیا گیا