ایک سے زائد بجلی میٹرز لگوانے والوں کیخلاف کارروائی کا فیصلہ

ویب ڈیسک: وفاقی حکومت نے سلیب سسٹم سے فائدہ اٹھانے کے لیے اپنے گھروں اورعمارتوں میں ایک سے زائد بجلی کے میٹرز نصب کرانے والوں کے خلاف کریک ڈاؤن کا فیصلہ کر لیا ہے۔ سیکرٹری توانائی کے مطابق وہ صارفین جو ایک اے سی کے ساتھ ماہانہ 301سے500یونٹ دو اے سی کے ساتھ 501سے700 یونٹ اور تین اے سی کے ساتھ درجہ وار 701 سے 2500 یونٹ تک بجلی استعمال کرتے ہیں، ان کے ٹیکسوں کے ساتھ بلز کی مالیت ان صارفین کے بلز سے کہیں کم ہے جو اے سی استعمال نہیں کرتے اور ایک سے 300یونٹ بجلی استعمال کرنے والوں کے زمرے میں آتے ہیں۔
سیکرٹری توانائی نے کہا کہ ایک ہزار سے زائد یونٹ بجلی استعمال کرنے والوں نے دگنے اور تگنے میٹر سسٹم نصب کر رکھے ہیں جس سے ایک مکان یا عمارت کا بل دو یا تین میں تقسیم ہو کر کم رہ جاتا ہے۔ اس طرح ناجائز فائدہ اٹھانے والے صارفین کے خلاف زبردست کریک ڈاؤن کیا جائے گا۔ اس حوالے سے لوگوں کا کہنا ہے کہ ایک سے زائد میٹرز کی اجازت ان عمارتوں کو دی گئی ہے جہاں ایک سے زائد خاندان رہائش پذیر ہیں یا کرایہ پر رہتے ہیں۔

مزید پڑھیں:  تحریک انصاف نے آزاد اراکین کی فہرست الیکشن کمیشن میں جمع کرا دی