میر سرفراز بگٹی

میر سرفراز بگٹی وزیراعلیٰ بلوچستان منتخب ،حلف اٹھا لیا

ویب ڈیسک: پیپلزپارٹی سے تعلق رکھنے والے میر سرفراز بگٹی41ووٹ لے کر بلامقابلہ وزیراعلیٰ بلوچستان منتخب ہو گئے، جس کے بعد عہدے کا حلف اٹھا لیا۔
بلوچستان اسمبلی کا اجلاس اسپیکر عبدلخالق اچکزئی کی زیر صدارت 40 منٹ کی تاخیر سے شروع ہوا، وزیر اعلی بلوچستان کے انتخاب کے لیے کسی دوسرے رکن کے کاغذات نامزدگی جمع نہ کرنے کی وجہ انتخاب بلا مقابلہ ہوا، تاہم اسمبلی قوائد اور ضابطہ کار کے مطابق قائد ایوان یا وزیراعلی کے انتخاب کیلئے رائے شماری ہوئی۔
اجلاس میں وزیراعلیٰ کے لیے پیپلز پارٹی کے نامزد امیدوار سرفراز بگٹی ایوان نے 65 کے ایوان میں 41 ارکان کا اعتماد حاصل کرلیا۔
سرفراز بگٹی پیپلز پارٹی کے 17 مسلم لیگ(ن)کے14بلوچستان عوامی پارٹی کے 4عوامی نیشنل پارٹی کے 3حق دو تحریک اور جماعت اسلامی کے ایک، ایک جبکہ ایک آزاد رکن مولوی نور اللہ نے حق میں ووٹ دیا، اسپیکر نے اپنا ووٹ استعمال نہیں کیا۔
بعدازاں، نومنتخب وزیر اعلیٰ بلوچستان کی تقریب حلف برداری کوئٹہ میں منعقد ہوئی، گورنر بلوچستان عبدالولی کاکڑ نے نومنتخب وزیر اعلی سے حلف لیا۔
تقریب حلف برداری میں پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹوزرداری فیصل کریم کنڈی سمیت اعلی سول و فوجی حکام نے شرکت کی۔

مزید پڑھیں:  پی ٹی آئی کا ایڈہاک ججزلانے کیخلاف سپریم جوڈیشل کونسل جانےکااعلان