پشاور،انتخابی نتائج کیخلاف درخواست پر الیکشن کمیشن کو نوٹس، جواب طلب

ویب ڈیسک: پشاور ہائیکورٹ کی جانب سے انتخابی نتائج کیخلاف درخواست پر الیکشن کمیشن کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 2 روز میں جواب طلب کر لیا گیا۔
ذرائع کے مطابق پشاور ہائیکورٹ کے جج جسٹس اشتیاق ابراہیم اور جسٹس شکیل احمد نے پی ٹی آئی رہنماؤں کی جانب سے انتخابی نتائج کی دستاویزات کی فراہمی کے لیے کیس کی سماعت کی۔
جسٹس اشتیاق ابراہیم نے دوران سماعت درخواست کنندہ کے وکیل سے کہا کہ آپ فارم 45 مانگ رہے ہیں، جس پر علی گوہر درانی ایڈووکیٹ نے کہا کہ بالکل وہی مانگ رہے ہیں جو نہیں دیئے جا رہے، مصدقہ دستاویز فراہم کی جائیں۔
پشاور ہائیکورٹ نے الیکشن کمیشن کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 7 مارچ تک جواب طلب کر لیا۔
یاد رہے کہ پشاور ہائیکورٹ میں انتخابی نتائج کیخلاف درخواست دائر کرنے والوں میں پی ٹی آئی رہنما تیمور سلیم جھگڑا، کامران بنگش، محمود جان اور علی زمان شامل ہیں جبکہ ملک شہاب، عاصم خان، حامد الحق اور ارباب جہانداد نے بھی انتخابی دستاویزات کی فراہمی کے لیے درخواستیں دی ہیں۔

مزید پڑھیں:  انتشاری سیاست ن لیگ کا شیوا ، جعلی حکومت بدحواسی کاشکار ہے،بیرسٹر سیف