پنجاب اسمبلی

پنجاب اسمبلی میں مخصوص نشستوں پر ارکان نے حلف اٹھا لیا

ویب ڈیسک: پنجاب اسمبلی میں مخصوص نشستوں پر ارکان نے حلف اٹھا لیا، اپوزیشن کی جانب سے شدید نعرے بازی کی گئی۔
صوبائی اسمبلی کا اجلاس اسپیکر ملک محمد احمد خان کی صدارت میں ڈیڑھ گھنٹہ تاخیر سے شروع ہوا، جس میں اپوزیشن رکن رانا آفتاب کی جانب سے کورم نامکمل ہونے کی نشاندہی کی گئی، تاہم اسپیکر نے ایوان میں 104 ارکان کی موجودگی کا کہتے ہوئے کورم کو مکمل قرار دیا۔
اسپیکر پنجاب اسمبلی ملک محمد خان نے نومنتخب ارکان کو حلف کی دعوت دی جب کہ سیکرٹری اسمبلی نے پینل آف چیئرکے ناموں کا اعلان کردیا، جن میں رانا منور حسین، سید علی حیدر گیلانی، غلام مرتضی اور راحیلہ نعیم شامل ہیں۔
بعد ازاں اجلاس میں نومنتخب اراکین حلف لینے کے لیے کھڑے ہو گئے، جس پر اپوزیشن نے ایوان میں احتجاج شروع کردیا۔ اپوزیشن رکن رانا آفتاب نے کہا کہ الیکشن جیتنے کے بعد ہمارے ارکان نے سنی اتحاد کونسل کو جوائن کیا۔ یہ ہماری نشستیں ہیں، ہمیں دی جانی چاہییں۔
اپوزیشن کے احتجاج پر اسپیکر پنجاب اسمبلی نے استدعا کی کہ ایوان کو رولز آف بزنس کے مطابق چلائیں۔ اس موقع پر اپوزیشن رکن رانا آفتاب اور اسپیکر ملک احمد خان کے درمیان نوک جھونک بھی ہوئی۔
اپوزیشن کے اعتراض کے باوجود نومنتخب ارکان نے حلف لینا شروع کردیا،سپیکر پنجاب اسمبلی نے مخصوص نشستوں پر نومنتخب خواتین ارکان سے حلف لینا شروع کردیا جب کہ اپوزیشن نے اپنی نشستوں پر کھڑے ہو کر احتجاج کیا اور شیم شیم کے نعرے لگائے۔
اپوزیشن ارکان کی جانب سے شدید احتجاج اور نعرے بازی کے دوران مخصوص نشستوں پر ارکان نے حلف اٹھا لیا، اس دوران اپوزیشن ارکان نامنظور نامنظور کے نعرے لگاتے رہے۔

مزید پڑھیں:  صوابی : ایڈیشنل آئی جی خیبرپختونخوا کی گاڑی حادثے کا شکار ،1اہلکار جاں بحق،4زخمی