پشاور دھماکے کا ایک اہم ملزم گرفتار، زخمی دہشتگرد بھی ہوش میں آ گیا

ویب ڈیسک: پشاور دھماکے میں اہم پیشرفت ہوئی ہے۔ سی ٹی ڈی نے دھماکے کا ایک اہم ملزم گرفتار کر لیا ہے جبکہ واقعے میں زخمی دہشتگرد بھی ہوش میں آ گیا۔
ذرائع کے مطابق پشاور بورڈ بازار کے علاقے میں گزشتہ روز ہونے والے دھماکے کے حوالے سے تفتیش جاری ہے ، اس دوران سی ٹی ڈی نے واقعہ میں‌ملوث اہم ملزم گرفتار کر لیا ہے جبکہ زخمی دہشتگرد کو بھی ہوش آ گیا۔
ذرائع سی ٹی ڈی کے مطابق بورڈ بازار ناصرباغ روڈ پر ہونے والے دھماکے کی تحقیقات جاری ہیں، اس دوران ہوش میں آنے والے زخمی دہشتگرد کا بیان بھی آج قلمبند کیا جائے گا۔
سی ٹی ڈی ذرائع کے مطابق دھماکے کا ایک اہم ملزم بھی گرفتار کر لیا گیا ہے۔ جائَے وقوعہ سے ملنے والے شواہد کی بنیاد پر 3 مشتبہ افراد کو حراست میں لیا گیا۔
سی ٹی ڈی حکام کا اس حوالے سے بتانا ہے کہ دھماکے کی جگہ موٹرسائیکل اور موبائ فون مکمل طور پر تباہ ہو چکی ہے جس کے باعث تفتیشی ٹیم کو تحقیقات میں مدد نہ مل سکی۔
یاد رہے کہ دھماکے میں لگنے والے تینوں دہشتگردوں کی شناخت ہوگئی۔
ذرائع کے مطابق تینوں دہشتگرد پشاور میں رہائش پذیر تھے۔
سی ٹی ڈی ذرائع کے مطابق ہلاک دہشتگرد سلیمان دیر کے مدرسے سے تعلیم حاصل کررہا تھا۔
سی ٹی ڈی ذرائع کے مطابق دو دہشتگردوں کے نام عامر اور عثمان ہیں، تینوں پشاور کے علاقے تہکال میں رہائش پذیر تھے۔

مزید پڑھیں:  بنوں امن مارچ کے مشران کا شفاف جوڈیشل انکوائری کا مطالبہ