مسعود پزشکیان کامیاب

ایران کے صدارتی الیکشن میں مسعود پزشکیان کامیاب

ویب ڈیسک: ایران کے صدارتی الیکشن میں مسعود پزشکیان نے کامیابی حاصل کرلی،ایرانی وزارت داخلہ نے اعلان کردیا ۔
ایرانی صدارتی الیکشن کے دوسرے مرحلے (رن آف)میں اصلاح پسند امیدوار مسعود پزشکیان ایک کروڑ 63لاکھ ووٹ لے نئے صدر منتخب ہوگئے جبکہ کے مدمقابل رجعت پسند سعید جلیلی ایک کروڑ 35 لاکھ ووٹ لے سکے۔
ایرانی وزارت داخلہ نے مسعود پزشکیان کی کامیابی کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ مسعود پزشکیان نے نے اکثریتی ووٹ حاصل کیے ہیں۔
اپنی وکٹری تقریر میں پزشکیان نے کہا کہ ہم سب اس ملک کے باشندے ہیں اور ہم سب کی طرف دوستی کا ہاتھ بڑھائیں گے۔
دوسری جانب پزشکیان کے مد مقابل امیدوار سعید جلیلی نے شکست کے بعد کہا کہ جس کو لوگوں نے منتخب کی ہمیں اس کی عزت کرنی چاہیے اور ہمیں اپنی پوری قوت نے ان کی(پزشکیان)کی مدد کرنی چاہیے تاکہ وہ مضبوطی سے آگے بڑھیں۔
مسعود پزشکیان پیش کے سرجن اور قانون ساز ہیں اور وہ مغربی ممالک سے اچھے تعلقات کے خواہاں ہیں۔
69 سالہ مسعود پزشکیان ہارٹ سرجن ہیں وہ دوسری اصلاحاتی حکومت میں صحت اور طبی تعلیم کیوزیرتھے، وہ 5 بار ایرانی پارلیمنٹ کے رکن اور ایک بار سے اس کے نائب صدر بھی رہے ہیں۔
مسعود پزشکیان ایران کے علاقے ماہ آباد میں پیدا ہوئے، ایران کے اسلامی انقلاب سے پہلیتبریزیونیورسٹی سیطب کی تعلیم حاصل کی۔
مسعود پزشکیان نے 1994میں کار حادثے میں بیوی اور ایک بچے کی موت کا صدمہ برداشت کیا، بیوی کی موت کے بعد انہوں نے دوبیٹوں، بیٹی کی پرورش کی اور دوسری شادی نہیں کی۔
مئی میں ایرانی صدر ابراہیم رئیسی کی ہیلی کاپٹر حادثے میں وفات کی وجہ سے ایران میں قبل از وقت صدارتی انتخابات ہوئے۔

مزید پڑھیں:  صوبائی و ڈسٹرکٹ پبلک سیفٹی کمیشن کی فعالیت پر کام کا آغاز