انٹرنیٹ و موبائل فون بندش

محرم الحرام :انٹرنیٹ و موبائل فون بندش پر صوبوں سے مشاورت کا فیصلہ

ویب ڈیسک: حکومت نے یکم تا دس محرم الحرام ڈرون کے استعمال پر پابندی عائد کرتے ہوئے انٹرنیٹ و موبائل فون کی بندش پر صوبوں سے مشاورت کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔
وزیر داخلہ محسن نقوی کی زیر صدارت وزارت داخلہ میں ملک بھر میں محرم الحرام کے دوران امن وامان کے قیام سے متعلق اہم اجلاس ہوا۔
اجلاس میں تمام صوبوں، آزاد کشمیر، گلگت بلتستان اور اسلام آباد میں محرم الحرام کے سیکیورٹی پلان کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔
یکم محرم سے دس محرم الحرام تک جلوسوں اور مجالس کی سیکیورٹی کے پیش نظر ڈرون کے استعمال پر پورے ملک میں پابندی کا فیصلہ کیا گیا تاہم انٹرنیٹ یا موبائل فون کی بندش کا فیصلہ سکیورٹی خدشات کے تناظر میں متعلقہ صوبوں کی مشاورت سے کیا جائے گا۔
وزیر داخلہ محسن نقوی نے کہا کہ انٹرنیٹ یا موبائل فون کی بندش سے شہریوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔
انہوں نے کہا کہ اس ضمن میں زمینی حقائق اور سکیورٹی صورتحال کے مطابق فیصلہ کرنے کی ضرورت ہے، وفاق صوبوں، آزاد کشمیر، گلگت بلتستان اور اسلام آباد میں قیام امن کیلئے ہر ممکن تعاون فراہم کرے گا۔
محسن نقوی نے کہا کہ امن عامہ سے متعلق صوبوں، آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان کی ضروریات کو پورا کیا جائے گا، بارشوں کے پیش نظر جلوسوں اور مجالس کے لیے پیشگی پلان تیار کیا جائے اور داخلی اور خارجی راستوں پرسخت چیکنگ کی جائے، جلوسوں اور مجالس کی کیمروں کے ذریعے نگرانی کی جائے۔
وزیر داخلہ نے کہا کہ ضابطہ اخلاق کی پابندی کرائی جائے، مساجد، امام بارگاہوں اور دیگر عبادت گاہوں کی سیکیورٹی پر بھرپور توجہ دی جائے، پنجاب، خیبرپختونخوا، سندھ، بلوچستان، آزاد کشمیر ، گلگت بلتستان اور اسلام آباد کے آئی جیز پولیس اور سیکریٹریز داخلہ نے محرم الحرام کے دوران امن عامہ کے پلان پر بریفنگ دی۔

مزید پڑھیں:  صوبائِی حکومت کا سرکاری رہائش گاہوں کے کرایوں میں اضافہ