غیرت کےنام پردوافراد کالرزہ خیزقتل

صوابی میں غیرت کےنام پردوافراد کالرزہ خیزقتل، ملزم گرفتار

صوابی میں‌ مزید دو زندگیاں غیرت کی بھینٹ چڑھا دی گئیں، صوابی پولیس نے جاں بحق افراد کی لاشوں کو ہسپتال منتقل کرنے سمیت ملزم کو بھی دھر لیا.
ویب ڈیسک: ضلع صوابی میں غیرت کےنام پردوافراد کالرزہ خیزقتل، لاشیں ہسپتال پوسٹ مارٹم کیلئے منتقل کر دی گئیں۔
تفصیلات کے مطابق ضلع صوابی میں غیرت کےنام پردوافراد کالرزہ خیزقتل ، لڑکا اور لڑکی کو قتل کر دیا گیا۔ اس حوالے سے پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ بھائی نے اپنی سگی بہن اور اس کے دوست کو قتل کیا۔ رپورٹ درج کر لی گئی۔
تھانہ ٹوپی کی حدود بٹاکڑہ میں غیرت کے نام پر دو افراد کو موت کے گھاٹ اتار دیا گیا، پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ بھائی نے فائرنگ کرکے اپنی سگی بہن اور اس کے دوست کو قتل کیا۔
ذرائع کے مطابق لاشوں کو پوسٹ مارٹم کے لئے ہسپتال منتقل کردیا گیا، جہاں جاں بحق ہونے والے لڑکی کی شناخت 20 سالہ خائستہ خانہ اور 18 سالہ عمران کے ناموں سے کرلی گئی۔
پولیس رپورٹ کے مطابق مقتولہ کی باپ کی مدعیت میں ملزم کے خلاف دوہرے قتل کا مقدمہ درج کرلیا گیا۔ اس کے بعد پولیس نے تیز ترین کارروائی کرتے ہوئے ملزم کو آلہ قتل سمیت موقع سے گرفتار کرلیا۔
یاد رہے کہ ضلع صوابی میں غیرت کے نام پر دو افراد کا لرزہ خیزقتل کر دیا گیا۔ ان واقعات کی بیخ کنی کرنے کیلئے حکومت کو بھرپور اقدام کرنا ہوگا اور کسی کو بھی قانون ہاتھ میں لینے کی اجازت نہیں ہونی چاہئے.
صوابی میں‌پیش آنے والے اس واقعے کے دوران لڑکا اور لڑکی دونوں کو قتل کر دیا گیا جن کی لاشیں پوسٹ مارٹم کیلئے ہسپتال منتقل کر دی گئیں.
پولیس نے رپورٹ درج ہونے کے بعد تیز ترین کارروائی کرتے ہوئے دوہرے قتل کے ملزم کو آلہ قتل سمیت گرفتار کر لیا.

مزید پڑھیں:  تحریک انصاف رہنما رؤف حسن کا مزید 3روزہ جسمانی ریمانڈ منظور