بھائی کے ہاتھوں 3 بہنیں قتل

صوابی میں بھائی کے ہاتھوں 3 بہنیں قتل، ملزم فرار

ویب ڈیسک: ضلع صوابی میں تہرے قتل کی افسوسناک واردات، بھائی کے ہاتھوں 3 بہنیں قتل، بہن کی منگنی سے ناخوش بھائی اپنی تینوں بہنوں کو قتل کر کے موقع سے فرار ہو گیا۔
پولیس کے مطابق فائرنگ کا واقعہ زیدہ کے گاؤں زیدہ محلہ چنگن خیل میں پیش آیا جہاں تہرے قتل کا ملزم واردات کے بعد فرار ہو گیا۔
اس حوالے سے پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ بھائی کے ہاتھوں 3 بہنیں قتل ہونے کا واقعہ رونما ہونے کے فوری بعد نفری جائے وقوعہ پہنچ گئی، جاں بحق ہونے والی 3 بہنوں کی عمریں 18سے 24سال کے درمیان ہیں جبکہ گھر میں موجود دو دیگر بہنوں نے چھپ کر اپنی جانیں بچائیں۔
پولیس نے اپنی رپورٹ میں بتایا ہے کہ ایک بہن کی منگنی پر ملزم ناخوش تھا اور اسی وجہ سے اس نے فائرنگ کر کے 3 بہنوں کی زندگی کا چراغ گل کر دیا۔ مقتول بہنوں کی والدہ پہلے ہی انتقال کر چکی ہیں جبکہ والد ان کے ساتھ میں رہتے ہیں۔
واردات کے بعد پولیس نے ملزم کی گرفتاری کے لیے چھاپہ مار کارروائیاں شروع کر دی ہیں جبکہ اس کے ساتھ ہی معاملے کی ہر پہلو سے تحقیقات بھی کی جا رہی ہیں۔
یاد رہے کہ ریسکیو1122نے واقعے کی اطلاع ملتے ہی فوری جائے وقوعہ پہنچ کر امدادی کارروائیاں کرتے ہوئے جاں بحق خواتین کی لاشیں باچا خان ہسپتال منتقل کردیں۔
پولیس رپورٹ کے مطابق بھائی نوشاد ولد عبدالحلیم نے اپنی سگی تین بہنوں 24 سالہ سنبل، 22سالہ زرقا اور 18سالہ سونیا کو فائرنگ کر کے قتل کر دیا اور ارتکاب جرم کے بعد ملزم جائے وقوعہ سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا۔
بھائی کے ہاتھوں 3 بہنیں قتل ہونے کا واقعہ انتہائی دلخراش ہے، تہرے قتل کے ملزم کی گرفتاری کیلئے پولیس نے چھاپہ مار کارروائیوں کا آغاز کر دیا ہے۔

مزید پڑھیں:  ایم ڈی کیٹ ٹیسٹ 22 ستمبر کو منعقد کرنے کا فیصلہ