نوشہرہ خودکشیوں کے واقعات میں تشویشناک حد تک اضافہ ہوگیا

نوشہرہ: پولیس کے مطابق ایک ہفتہ کے دوران تین خواتین سمیت چار افراد نے خودکشی کرکے اپنی زندگی کا خاتمہ کردیا،نوشہرہ خودکشی کےواقعات میں اپنے ہاتھوں اپنی جان گنوانے والوں میں زیادہ تر تعداد خواتین کی ہے،

نوشہرہ خویشکی بالا میرہ میں والدہ کے ساتھ زبانی تکرار پر 14سالہ ماہ نور دختر نیاز علی نے پستول سے کن پٹی پر فائر کرکے اپنی زندگی کا خاتمہ کردیا،

نوشہرہ اضاخیل پایان کی 16سالہ شمائیلہ دخترمحمدبشیرخان نے گھر یلو حالات سے تنگ آکر گندم کی زیلی کیڑے مار گولیاں کھالی، نوشہرہ تشویش ناک حالت میں لیڈی ریڈنگ ہسپتال پشاور منتقل کردی گئی،نوشہرہ شمائیلہ کی حالت انتہائی تشویشناک ہے،

نوشہرہ گاوں ترلندی میں گیارہ سالہ حناء خان دختر فقیر تاج نے والدہ سے تکرار کے بعد کچن میں دوپٹہ اپنے گلے میں ڈال کر پھانسی دیکر اپنی زندگی کا خاتمہ کردیا،نوشہرہ پوسٹ مارٹم کے بعد مقدمہ درج کرلیے،

ریسکیو1122کے مطابق نوشہرہ دریائے پل سےگزشتہ روز نامعلوم نوجوان نے کود کر دریائے کابل میں چھلانگ لگا کر خودکشی کرلی،نوشہرہ نوجوان کی نعیش کی تلاش جاری ہے نعیش نکالی نہ جاسکی۔