اسلام آبادمندر کی تعمیر کیخلاف ایک اور دائر درخواست پر فیصلہ محفوظ

اسلام آباد :مندر کی تعمیر کے خلاف ایک اور دائر درخواست پر فیصلہ محفوظ کر لیا گیا ، اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس عامر فاروق نے فریقین کے دلائل مکمل ہونے پر فیصلہ محفوظ کرلیا،درخواست گزار خوشنود خان عدالت کے روبرو پیش ہوئے،وفاق کی جانب سے ڈپٹی اٹارنی جنرل خالد محمود راجہ عدالت پیش، درخواست گزار کا کہنا تھا کہ چار کنال اراضی مندر کو دی گئی، یہ غیر قانونی طور پر الاٹ کی گئی، 2006 میں مساجد شہید ہوئے اور کہا گیا کہ انکے زمین دیں گے، درخواست گزار کا کہنا تھا کہ اسلام آباد اور راولپنڈی میں 3 مندر پہلے سے موجود ہیں، مندر کی تعمیر کے لئے پیسے دینا فضول خرچی ہیں، ڈپٹی اٹارنی جنرل کے مطابق مندر پر کام روکا گیا ہے، اور معاملہ اسلامی نظریاتی کونسل کے پاس ہے۔