پاکستانی عوام اپنے ترک بھائیوں اور بہنوں کے غم میں برابرکے شریک ہیں ۔وزیر اعظم عمران خان

ویب ڈیسک(اسلام آباد): وزیر اعظم عمران خان نے ترک صدر رجب طیب اردگان کو ٹیلی فون کیا اور ترکی میں زلزلے پر اظہار افسوس کرتے ہوئے انہیں ہر ممکن مدد کی پیشکش کردی، دونوں رہنماں نے فرانس میں گستاخانہ خاکوں کے معاملے پر بات چیت بھی کی۔عمران خان نے کہا کہ پاکستانی عوام اپنے ترک بھائیوں اور بہنوں کے غم میں برابر کا شریک ہے، پاکستان کے لوگ اپنے ترک بھائیوں اور بہنوں کے ساتھ کھڑے ہیں، 2005 کے زلزلے کے دوران ترکی پاکستان کے ساتھ کھڑا تھا۔ وزیراعظم نے زلزلے سے متاثرہ افراد کی جلد صحت یابی کے لیے دعا کی اور غم کی اس گھڑی میں ترک عوام کو ہر ممکن مدد کی پیشکش کی۔
عمران خان نے کہا کہ مسلم دنیا کے رہنمائوں کو مسلمانوں کے خلاف نفرت اور انتہا پسندی کے خلاف مل کرآگے بڑھنا چاہیے، مسلمان رہنما مغربی دنیا کے اپنے ہم منصبوں کو پیغمبر اکرمۖ کے ساتھ تمام مسلمانوں کی محبت سے آگاہ کریں۔دونوں رہنمائوں نے مغربی دنیا یورپ میں اسلامو فوبیا کی بڑھتی ہوئی لہر پر تشویش کا اظہار کیا۔ دونوں رہنمائوں نے پشاور مدرسہ پر دہشت گرد حملے پر بھی تبادلہ خیال کیا۔ عمران خان نے کہا کہ پشاور میں بزدلانہ دہشت گرد حملہ پاکستان کے دشمنوں نے کیا ہے۔
عمران خان کا کہنا تھا کہ یورپی ریاستوں کے ہولوکاسٹ سے انکار کو مجرم قرار دینے کے قوانین موجود ہیں اس لیے ہولوکاسٹ کی طرح مغرب کو پوری دنیا کے مسلمانوں کے جذبات کا احترام کرنا چاہیے، مغرب کو اظہار رائے کی آزادی کے جارحانہ اقدامات کے جواز بخشنے سے باز رہنا چاہیے۔
دونوں رہنماں نے پاک ترک وزرائے خارجہ کی ملاقات پر اتفاق کیاہے کہا کہ دونوں وزرائے خارجہ اسلامو فوبیا سے نمٹنے کی کوششوں سمیت باہمی دلچسپی کے امور پر بات کریں گے۔