وزیراعظم شہبازشریف

وزیراعظم شہبازشریف کا قائممقام افغان وزیراعظم کوٹیلیفون، زلزلے میں جانی ومالی نقصان پراظہار تعزیت

ویب ڈیسک: وزیر اعظم محمد شہباز شریف نے عبوری افغان حکومت کے قائم مقام وزیر اعظم ملا محمد حسن اخوند کو ٹیلی فون کیا، وزیر اعظم نے افغانستان میں آنے والے تباہ کن زلزلے کے نتیجے میں جانی اور مالی نقصان پر پاکستان کی حکومت اور عوام کی جانب سے گہری ہمدردی اور تعزیت کا اظہار کیا۔

جاں بحق افراد کی مغفرت اور زخمیوں کی جلد صحتیابی کی دعا کی۔

وزیراعظم شہبازشریف نے کہا کہ پاکستان مشکل کی اس گھڑی میں اپنے افغان بھائیوں کے ساتھ کندھے سے کندھا ملا کر کھڑا ہے۔ غلام خان اور انگور اڈہ بارڈر کراسنگ پوائنٹس کو پاکستانی ہسپتالوں میں علاج کے لیے شدید زخمی افغانوں کی آمدورفت کے لیے کھول دیا گیا ہے، آنے والے دنوں میں بھی پاکستان افغانستان کی مدد جاری رکھے گا۔

مزید دیکھیں :   اپوزیشن کی تجاویز مسترد، قومی اسمبلی سے مالیاتی بل23-2022 منظور

وزیراعظم شہبازشریف نے موثر سرحدی انتظام کے ذریعے تجارت اور لوگوں کی نقل و حرکت کو آسان بنانے کے لیے حکومت پاکستان کے اقدامات سے بھی آگاہ کیا اور کہا کہ پاکستان امن، ترقی اور خوشحالی کے مقصد کو فروغ دینے کے لیے دوطرفہ تعلقات کو مضبوط بنانے کے لیے پرعزم ہے۔