ثمینہ بیگ کے ٹو سر کرنے والی پہلی پاکستانی خاتون کوہ پیما بن گئیں

پاکستانی کوہ پیما ثمینہ بیگ، جن کا تعلق گلگت بلتستان کے گاؤں شمشال سے ہے، کے ٹو  چوٹی سر کرنے والی پہلی پاکستانی خاتون بن گئی ہیں۔

ثمینہ بیگ اور ان کی سات افراد کی مضبوط پاکستانی ٹیم نے آج (جمعہ) صبح 7:42 پر  کے ٹو  کی وحشی چوٹی کو کامیابی سے سر کیا۔ یہ دنیا کی سب سے خطرناک اور مشکل سمٹ کے طور پر جانی جاتی  ہے۔

مزید پڑھیں:  خیبر پختونخوا انڈر 23انٹر ریجنل گیمز کا میلہ پشاور میں سج گیا

کے ٹو  دنیا کی دوسری بلند ترین چوٹی ہے جس کی اونچائی سطح سمندر سے 8,611 میٹر ہے۔

2013 میں، بیگ دنیا کے سب سے اونچے پہاڑ ماؤنٹ ایورسٹ کو سر کرنے والی پہلی پاکستانی خاتون بن گئیں۔

مزید پڑھیں:  کلکتہ نائٹ رائیڈرز نے تیسری بار آئی پی ایل ٹائٹل جیت لیا

ثمینہ نے کہا کہ وہ خود کو خوش قسمت سمجھتی ہیں کہ انہیں کے ٹو کے اوپر کھڑے ہونے کا موقع ملا۔ وہ پاکستانی ٹیم کی قیادت کر رہی تھیں۔

پاکستانی ٹیم کوہ پیما ثمینہ بیگ، عید محمد، بلبل کاری، احمد بیگ، رضوان داد، وقار علی، اکبر حسین سدپارہ پر مشتمل ہے۔