معاشی پابندیاں

اسرائیلی فوج کو تیل دینے والی کمپنیوں پر معاشی پابندیاں لگانے کا مطالبہ

ویب ڈیسک: عالمی سطح پر امن اور سکیورٹی کو یقینی بنانے والے ادارے اقوام متحدہ کے دو نمائندوں نے غزہ جنگ کے دوران اسرائیلی فوج کو تیل دینے والی کمپنیوں پر معاشی پابندی لگانے کا مطالبہ کیا ہے ۔
غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق خوراک کے حق سے متعلق اقوام متحدہ کے خصوصی نمائندے مائیکل فخری نے ریسرچ بھی پیش کی ہے۔
مائیکل فخری کے مطابق امریکا، برازیل، روس، آذربائیجان اور قازقستان کے ذریعے اسرائیلی فوج کو تیل دیا جا رہا ہے، اسرائیلی فوج کو تیل سپلائی کرنا غزہ میں نسل کشی میں ملوث ہونے جیسا ہی ہے۔
نمائندہ اقوام متحدہ مائیکل فخری نے کہا کہ اسرائیلی فوج کو تیل دینے والی کمپنیوں پر معاشی پابندیاں لگنی چاہئیں۔
مناسب رہائش کیحق سے متعلق خصوصی نمائندہ یو این بالاکرشنن راجا گوپال نے 3 تیل کمپنیوں کو تنبیہہ کرتے ہوئے کہا کہ ان 3 تیل کمپنیوں کو یہ کام روک دینا چاہیے یا نتائج کے لیے تیار رہنا چاہیے۔

مزید پڑھیں:  غزہ کے الشفا ہسپتال کے سامنے دوسری اجتماعی قبر دریافت