الیکشن کی تاریخ

پی ٹی آئی کا گورنر کو فوری الیکشن کی تاریخ دینے کا نوٹس

ویب ڈیسک: الیکشن کی تاریخ میں تاخیر پر پی ٹی آئی کی جانب سے گورنر خیبر پختونخوا کو قانونی چارہ جوئی کیلئے نوٹس جاری کر دیا گیا ہے یہ نوٹس گذشتہ روز سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے سابق صدر قاضی محمد انور ایڈووکیٹ کی جانب سے عمران خان کی ہدایت پر بھیجا گیا ہے۔ نوٹس میں کہا گیا ہے آپ کو گورنر خیبرپختونخوا مقرر کیا گیا اور آپ اس حلف کے ساتھ عہدے پر براجمان ہوئے کہ آپ خیبر پختونخوا کے گورنر کی حیثیت سے آئین کی حفاظت اور دفاع کریں گے اور اپنے فرائض سرانجام دیں گے ۔
منتخب وزیر اعلیٰ محمود خان کے مشورے پر آپ نے 18 جنوری 2023 کو صوبائی اسمبلی تحلیل کرنے کے مشورے کے 24 گھنٹوں کے اندر اسمبلی تحلیل کر دی لیکن آئین کے آرٹیکل 105 کے تحت اپنی ذمہ داری نظر انداز کرتے ہوئے آپ نے 90 دن کے اندر عام انتخابات کے انعقاد کیلئے تاریخ کا اعلان نہیں کیا۔ نوٹس کے مطابق تحلیل کے ایک ہفتہ بعد آپ نے گورنر ہائوس میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آپ کا انتخابات کی تاریخ کے تعین سے کوئی تعلق نہیں کیونکہ یہ اسٹیبلشمنٹ اور الیکشن کمیشن کا فرض ہے۔ اس کے بعد آپ نے اپنی پریس بریفنگ میں کہا کہ عدالت آپ کو طلب نہیں کر سکتی کیونکہ آپ اپنے قول و فعل کے حوالے سے استثنیٰ رکھتے ہیں۔ پشاور ہائی کورٹ میں آئینی درخواستیں دائر کی گئیں کہ آپ کو آئین کے آرٹیکل 105 کے مینڈیٹ اور صوبائی اسمبلی کے عام انتخابات کے انعقاد کی تاریخ کے مطابق اپنے فرائض سرانجام دینے کی ہدایت دی جائے تاکہ انتخابات منعقد ہوں ۔
سپریم کورٹ نے سومو ٹو ایکشن لیا اور قرار دیا کہ اسمبلی کی تحلیل کی تاریخ سے نوے دن کے اندر انتخابات کا انعقاد اسلامی جمہوریہ کے آئین کے آرٹیکل 105 کا حکم ہے پاکستان کے 1973 اور صوبہ پنجاب کے لئے تاریخ کا اعلان الیکشن کمیشن اور صدر پاکستان کے درمیان مشاورت سے کرنے کی ہدایت کی اور اسی مقصد کیلئے صوبہ خیبر پختونخوا کیلئے الیکشن کمیشن کو ہدایت کی گئی کہ وہ آپ سے مشاورت کرے اس بات کی توہین کرنا کہ دونوں صوبوں میں عام انتخابات آئین کے آرٹیکل 105 کی مقررہ مدت کے مطابق ہو رہے ہیں ۔ الیکشن کمیشن نے آپ کو سپریم کورٹ کی ہدایات پر عمل کرنے پر آمادہ کرنے کی کوشش کی اور درحقیقت آئین میں کوئی مثبت نتیجہ نہیں نکلالہذا میں اس نوٹس کے ذریعے آپ سے مطالبہ کرتا ہوں کہ اس نوٹس کی وصولی کے بعد فوری فیصلہ کریں اور تاریخ کا اعلان کریں۔

مزید پڑھیں:  ٹی 20ورلڈ کپ کے سپر 8مرحلے کا آغاز آج سے ہوگا