جسٹس مظاہرنقوی ریفرنس دائر

جسٹس مظاہرنقوی کے خلاف جوڈیشل کونسل میں ریفرنس دائر

ویب ڈیسک : پاکستان بار کونسل نے جسٹس مظاہر علی اکبر نقوی کے خلاف سپریم جوڈیشل کونسل میں ریفرنس دائر کر دیا ہے جس میں جسٹس مظاہر پر الزامات کی تحقیقات کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ نجی ٹی وی کے مطابق سپریم کورٹ کے جج جسٹس مظاہر علی نقوی کی آڈیو لیکس کے بعد وکلا کی جانب سے ان کے خلاف تحقیقات اور کارروائی کا مطالبہ کیا جارہا ہے۔
قبل ازیں ان کے خلاف سپریم جوڈیشل کونسل میں ریفرنس بھی دائر ہوچکے ہیں اور آج پاکستان بار نے بھی ان کے خلاف باضابطہ طور پر تحقیقات کا مطالبہ کر دیا ہے۔ پاکستان بار کونسل کی جانب سے بھی جمعہ کو جسٹس مظاہر علی نقوی کے خلاف سپریم جوڈیشل کونسل میں ریفرنس دائر کیا گیا ہے جس میں ان پر لگنے والے الزامات کی تحقیقات کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ درخواست میں کہا گیا ہے کہ جسٹس مظاہر علی اکبرکے خلاف سنجیدہ نوعیت کے الزامات سامنے آئے ہیںاس لیے ان پرعائدالزامات کی تحقیقات ضروری ہیں۔
قبل ازیں مسلم لیگ (ن) کے لائرز فورم کی جانب سے بھی جسٹس مظاہر نقوی کے خلاف سپریم جوڈیشل کونسل میں شکایت درج کروائی جاچکی ہے۔ وکلاء کی جانب سے جسٹس مظاہر نقوی کے خلاف آڈیو لیک کی بنیاد پر شکایت دائر کی گئی ہے۔ وکلاء نے درخواست میں سابق وزیر اعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الٰہی کے ساتھ جسٹس مظاہر نقوی کی مبینہ گفتگو کا ٹرانس کرپٹ بھی شامل کیا اور درخواست کی ہے کہ جسٹس مظاہر نقوی نے کوڈ آف کنڈکٹ کی خلاف ورزی کی ۔

مزید پڑھیں:  خیبر میں لوڈ شیڈنگ :ایم پی اے عبدالغنی نے گرڈ سٹیشن جاکر بجلی سپلائی بحال کردی