لطیف کھوسہ کے گھر فائرنگ

لطیف کھوسہ کے گھر فائرنگ، پولیس کا ملزمان کو جلد گرفتار کرنے کا دعویٰ

پولیس نے سابق گورنر پنجاب لطیف کھوسہ کے گھر پر فائرنگ کی فوٹیجز حاصل کرلیں، فائرنگ کرنے والے ملزمان چار تھے جن کی جلد گرفتاری کا دعویٰ کیا گیا ہے۔
ویب ڈیسک: تفصیلات کے مطابق پولیس کے مطابق مقدمہ اے ایس آئی نیاز احمد کی مدعیت میں تھانہ ڈیفنس اے میں درج کیا گیا جس کے بعد پولیس نے فائرنگ کے واقعے کی تفتیش شروع کر دی۔
لطیف کھوسہ کے گھر کے اطراف لگے کیمروں سے ملزمان کی تصاویر پولیس کو موصول ہوگئی ہیں۔
پولیس کے مطابق حملہ کرنے والے چار ملزمان تھے، دو ملزمان موٹرسائیکل پر اور دو پیدل تھے جب کہ ملزمان کی ڈی ایچ اے ناکہ سے گزرنے کی تصویر بھی حاصل کرلی ہیں۔
واضح رہے کہ لاہور میں سابق گورنر پنجاب لطیف کھوسہ کے گھر پر نامعلوم افراد کی فائرنگ سے ان کا ڈرائیور زخمی ہوا، جبکہ فائرنگ کے بعد ملزمان فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے۔
سردار لطیف کھوسہ کا کہنا تھا کہ اس طرح کے حربوں سے وکلاء کی تحریک کو کمزور نہیں کیا جا سکتا، ہم چیف جسٹس کے پیچھے کھڑے ہیں۔

مزید پڑھیں:  ٹی 20 سیریز، پاکستان اور نیوزی لینڈ کے مابین آج پہلا ٹاکرا ہوگا