فاٹااورپاٹا میں گھی و سٹیل انڈسٹری پرسیلز ٹیکس غیر آئینی قرار

ویب ڈیسک :سپریم کورٹ نے پشاور ہائیکورٹ کا فیصلہ کالعدم قرار دیتے ہوئے فاٹا اور پاٹا میں گھی و اسٹیل انڈسٹری پر سیلز ٹیکس غیر آئینی قرار دے دیاہے ۔
جسٹس منصور علی شاہ کی سربراہی میں4رکنی لارجر بینچ نے گھی اور اسٹیل مل مالکان کی اپیلوں پر سماعت کی ۔
عدالت عظمیٰ کے فیصلے میں کہاگیا ہے کہ قبائلی علاقوں کے انضمام کے بعد 30 جون 2024 تک سیلز ٹیکس وصولی غیر آئینی ہے۔
آئینی ترمیم کے ذریعے قبائلی علاقوں کا انضمام ہوا،قبائلی علاقوں میں انڈسٹری کو فروغ دینے کیلئے سیلز ٹیکس سے مستثنیٰ قرار دیا گیا تھا۔

مزید پڑھیں:  8فروری کو عوام فیصلہ کر چکے ہیں،زرتاج گل