عمران خان

9 مئی کیسز: عمران خان کی عبوری ضمانت میں یکم مارچ تک توسیع

ویب ڈیسک: بانی چیئرمین عمران خان کی جناح ہاؤس، عسکری ٹاور، مسلم لیگ ن ہاؤس جلانے سمیت 7 مقدمات میں عبوری ضمانت میں یکم مارچ تک توسیع کردی گئی۔
انسداد دہشت گردی عدالت کے جج ارشد جاوید کے روبرو ہونے والی سماعت میں بانی چیئرمین پی ٹی آئی کی آج بھی ویڈیو لنک کے ذریعے حاضری مکمل نہیں ہوسکی۔ عدالتی حکم کے مطابق واٹس ایپ پر عمران خان کی حاضری نہیں لگی۔
دوران سماعت عدالت نے ریمارکس دیئے کہ اڈیالہ جیل سپرنٹنڈنٹ توہین عدالت کے مرتکب ہوئے ہیں اگر سپرنٹنڈنٹ کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی شروع کی تو ملزم کی عبوری ضمانت پر فیصلہ تاخیر کا شکار ہو جائے گا۔
ملزم کی جیل سے حاضری کے معاملے کو چھوڑ دیتے ہیں۔ عدالت نے بانی پی ٹی آئی کی حاضری کے بغیر عدالتی کارروائی جاری رکھنے کا حکم دے دیا۔
عدالت نے فریقین سے استفسار کیا کہ ملزم کی عبوری ضمانتوں پر دلائل کے بعد میرٹ پر فیصلہ کر دیتے ہیں۔ اگر حاضری اور ملزم کی پیشی کا انتظار کیا تو فیصلے میں تاخیر ہو گی۔ سماعت کے دوران ڈپٹی پراسیکیوٹر عبدالجبار ڈوگر نے میرٹ پر فیصلے کی بات پر کوئی اعتراض نہیں کیا۔ پراسیکیوٹر نے موقف اختیار کیا کہ ملزم کی حاضری اہم نہیں ہے۔
بانی پی ٹی آئی کے وکیل بیرسٹر سلمان صفدر نے بغیر حاضری دلائل مکمل کرنے کی تجویز سے اتفاق کیا اور استدعا کی کہ عدالت آج ہی عبوری ضمانتوں پر فیصلہ کرے۔

مزید پڑھیں:  فلسطینی پرچم گرانے پر دھماکہ، اسرائیلی شہری زخمی