مہنگائی

رمضان المبارک :مہنگائی کی شرح میں اضافہ جاری

ویب ڈیسک: رمضان المبارک میں بھی ملک میں مہنگائی کی شرح میں اضافے کا رجحان جاری ، ایک ہفتے کے دوران 18 اشیائے ضروریہ کی قیمتیں بڑھ گئیں ۔
ادارہ شماریات کی جانب سے ہفتہ وار بنیادوں پر مہنگائی کے جاری کردہ اعدادوشمار کے مطابق ملک میں پچھلے تین ہفتوں سے مسلسل مہنگائی کی شرح میں اضافہ ہورہا ہے
ادارہ شماریات کے مطابق ایک ہفتے میں ٹماٹر کی فی کلو قیمت 30 روپے تک بڑھ گئی، رواں ہفتے کے دوران کیلے فی درجن 34 روپے تک مہنگے ہوئے، انڈے فی درجن 19 روپے تک، ایل پی جی کا گھریلو سلنڈر 146 روپے 71 پیسے مہنگا ہوا جبکہ لہسن کی فی کلو قیمت میں 22 روپے تک اضافہ ہوگیا۔
رواں ہفتے مٹن کی فی کلو قیمت میں 31 روپے، بڑا گوشت فی کلو 14 روپے، زندہ مرغی فی کلو 6 روپے تک مہنگی ہوگئی۔
اسی طرح برانڈڈ خوردنی تیل پانچ لیٹر کا ڈبا 29 روپے تک سستا بھی ہوا، برانڈڈ گھی اڑھائی کلو 14 روپے، 20 کلو آٹے کا تھیلا 26 روپے، چینی کی فی کلو قیمت میں 93 پیسے کی کمی واقع ہوئی۔
اعدادوشمار میں بتایا گیا ہے کہ حالیہ ہفتے کے دوران حساس قیمتوں کے اشاریہ کے لحاظ سے سالانہ بنیادوں پر 17 ہزار 732روپے ماہانہ تک آمدنی رکھنے والے طبقے کیلیے مہنگائی کی شرح 27.83فیصد رہی جبکہ 17 ہزار 733روپے سے 22 ہزار 888روپے ماہانہ تک آمدنی رکھنے والے طبقے کیلیے مہنگائی کی شرح 31.66فیصد ریکارڈ کی گئی۔
اسی طرح 22 ہزار 889روپے سے 29 ہزار 517 روپے ماہانہ تک آمدنی رکھنے والے طبقے کیلیے مہنگائی کی شرح 38.45 فیصد، 29 ہزار 518روپے سے 44ہزار 175 روپے ماہانہ تک آمدنی رکھنے والے طبقے کیلیے مہنگائی کی شرح 35.26فیصد رہی۔
اسی طرح 44 ہزار 176روپے ماہانہ سے زائد آمدنی رکھنے والے طبقے کیلیے مہنگائی کی شرح 28.90 فیصد رہی۔

مزید پڑھیں:  دہشتگردوں سے کوئی مذاکرات نہیں ہوں گے،وفاقی وزیر قانون