عمر کی حد ختم

اہم عہدوں پر تعیناتیوں کیلئے عمر کی حد ختم کرنے کا فیصلہ

ویب ڈیسک: وفاقی حکومت نے اہم عہدوں پر تعیناتیوں کیلئے پی ٹی آئی دور حکومت کی پالیسی میں ترامیم کا فیصلہ کرتے ہوئے 65سال تک کی عمر کی حد ختم کرنے کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔
وزیراعظم کی جانب سے وزیرخزانہ محمد اورنگزیب کی سربراہی میں قائم کمیٹی نے ترامیم تجویز کی ہیں۔
ذرائع کے مطابق اہم تعیناتیوں کے لیے عمر کی بالائی حد 65 سال کی شرط ختم کرنے کے حوالے سے سمری تیار کرلی گئی ہے، حتمی منظوری وفاقی کابینہ سے لی جائے گی۔
ترامیم کے بعد نئی تعیناتیوں کے لیے عمر کی کوئی بالائی حد نہِیں ہوگی، اس اقدام سے اسپیشل پروفیشنل پے اسکیلز پر نئی تعیناتیوں کی راہ ہموار ہوگی۔
اب 65 سال کی عمر کے بعد بھی تعیناتی ہوسکے گی اور موجودہ تعیناتی میں بھی 65 سال کی عمر کے بعد توسیع کی ترمیم بھی سمری کا حصہ ہے۔
حکومتی ذرائع کے مطابق اس اقدام سے باصلاحیت پیشہ وارانہ تکنیکی ماہرین کی خدمات حاصل کی جائیں گی۔
نئی تعیناتیوں سے وفاقی وزارتوں اورڈویژنزکی استعداد کار میں بہتری لائی جاسکے گی، ملک میں نئے ٹیلنٹ کے فروغ کے لیے 2019کی پالیسی میں ترامیم ضروری ہیں۔
ذرائع کے مطابق وفاقی وزارتوں اورڈویژنز میں گورننس کے نظام میں جدت لا کر مزیدموثر بنایاجائیگا۔

مزید پڑھیں:  ہتک عزت کیس: مراد سعید نے گزشتہ سماعتیں کالعدم قرار دینے کی درخواست کردی